چین میں سرکاری ملازموں، طلبا اور بچوں کے روزے رکھنے پر پابندی

بیجنگ: چین کی سرکاری ویب سائٹ کے مطابق چین میں پیر کے روز مقدس ماہ رمضان کا آغاز حکومت کے اس حکم سے ہوا کہ کوئی سرکاری ملازم، طالبعلم اور بچے روزہ نہیں رکھیں گے۔
چین کی حکمراں کمیونسٹ پارٹی ملحد ہے اور برسہا برس سے مسلم اکثریتی خطہ ژن جیانگ میں ،جہاں ایک کروڑ سے بھی زیادہ مسلم ایغور اقلیت رہائش پذیر ہے،حکومتی ملازمین اور بچوں کو روزے رکھنے کی اجازت نہیں ہے۔
حکومت کا یہ بھی حکم ہے کہ کوئی ہوٹل یا ریستوراں ماہ رمضان میں دن میں بند نہیں رہے گا اور حسب معمول کھلے رہیں گے۔ژن جیانگ میں متعدد مقامی حکومتی محکموں نے گذشتہ سال ہی اپنی ویب سائٹس پر نوٹس جاری کر کے روزوں پر پابندی کا حکم جاری کر دیا تھا۔
وسطی ژن جیانگ کے کورلا شہر میں سرکاری ویب سائٹ پر پوسٹ کیے گئے نوٹس کے مطابق تما پارٹی اراکین، کیڈر، حکومتی ملازمین، طلبا اور بچوں کو ہدایت کی جاتی ہے کہ وہ رمضان میں روزے نہ رکھیں۔اس خطہ میں آئے روز ایغور مسلمانوں اور حکومتی فورسز میں مسلح تصادم ہوتے رہتے ہیں اور حکومت چین وہاں اور چین کے کسی بھی علاقہ میں ہونے والے ہلاکت خیز حملوں کا الزام قدرتی وسائل سے مالال مال خطہ کی آزادی کے متوالے ایغو ر انتہا پسندوں پر لگاتی ہے۔

Read all Latest world news in Urdu at urdutahzeeb.com. Stay updated with us for Daily urdu news from world and more news in Urdu. Like and follow us on Facebook

Title: China restricts fasting in ramazan for xinjiang govt staff minors in Urdu | In Category: دنیا World Urdu News

Leave a Reply