چین میں کئی اسپتال ملازمین غفلت برتنے کے الزام میں گرفتار

شنگھائی: چین کے دو اسپتالوں میں عملے کی غفلت کی وجہ سے 14 لوگوں کے ایچ آئی وی اور ہیپاٹائٹس بی سے متاثر ہونے کے معاملے کو سنجیدگی سے لیتے ہوئے چین کی حکومت نے ان ملازمین کو برخاست کرکے گرفتار کر لیا ہے۔ سرکاری میڈیا نے آج یہ اطلاع دی۔ چین کی وزارت صحت نے ان واقعات کو سنجیدگی سے لیا ہے کیونکہ ان سے حکومت کی شبیہہ بھی خراب بھی ہوئی ہے اور لوگوں کا نظام صحت عامہ سے اعتماد اٹھ گیا ہے۔ پہلا واقعہ ساحلی جھجھیانگ صوبے میں ہوا جہاں ایک اسپتال کے ملازم نے طبی معائنے کے لیے بار بار ایک ہی ٹیوب کا استعمال کیا جس کی وجہ سے پانچ افرادکو ایڈز کا انفیکشن ہو گیا ہے۔
روزنامہ چائنا ڈیلی نے صحت کے حکام کے حوالے سے بتایا کہ اسپتال کے اس ملازم کو گرفتار کر لیا گیا ہے اور دیگر کے خلاف محکمہ جاتی تحقیقات کا حکم دیا گیا ہے۔ دوسرا واقعہ مشرقی شانڈونگ صوبے میں ہواجہاں اسپتال کے خون چڑھانے والی یونٹ میں ملازمین کی لاپرواہی کی وجہ سےنو لوگوں میں ہیپاٹائٹس بی کا انفیکشن پایا گیا۔ سرکاری خبر رساں ایجنسی ڑنہوا کے مطابق کنگداو سٹی کے پیپلز ہاسپٹل کے سربراہ اور نائب سربراہ اور دیگر عملے کو اس معاملے میں برطرف کر دیا گیا ہے۔ واضح رہے کہ چین میں سرکاری اسپتالوں میں ہر سال ایک ارب سے زیادہ لوگوں کا علاج ہوتا ہے اور امریکہ کے بعد وہ دنیا کا دوسرا سب سے بڑا دواسازی کا بازارہے۔

Read all Latest world news in Urdu at urdutahzeeb.com. Stay updated with us for Daily urdu news from world and more news in Urdu. Like and follow us on Facebook

Title: China punishes hospital staff after patients infected with hiv hepatitis b in Urdu | In Category: دنیا World Urdu News

Leave a Reply