ڈیموکریٹ ممبران پارلیمنٹ نے کیلی فورنیا پر ٹرمپ کے بیان کی سخت مذمت کی

کیلی فورنیا:امریکہ کے مشہور کیلی فورنیا ریاست کے سینئر ڈیموکریٹک ممبران پارلیمنٹ نے صدر ڈونالڈ ٹرمپ کے اس بیان کی سخت مذمت کی ہے کہ ریاست پوری طرح کنٹرول سے باہر ہے۔ ان ممبران پارلیمنٹ نے مسٹر ٹرپ کے اس بیان کو ’ظالمانہ اور غیر آئینی‘ قرار دیا ہے جس میں انہوں نے کیلی فورنیا کو دی جانے والی رقم کو روکے جانے کی بات کہی تھی۔
دراصل اس ریاست کے رہنماؤں نے ایک بل کو منظور کرنے کی بات کہی ہے جس کا مقصد ایسے تارکین وطن کی حفاظت کرنا ہے جن کے پاس پورے دستاویزات نہیں ہیں۔ مسٹر ٹرمپ اسی وجہ سے ان اراکین پارلیمان سے خفا ہیں۔ لاس اینجلس سے ڈیموکریٹ رکن پارلیمنٹ کےون ڈی لیون نے کل ایک بیان میں کہا کہ مرکزی حکومت کی جانب سے ریاست کو دی جانے والی رقم پر روک لگانے سے متعلق دھمکی غیر آئینی ہے جو کسی بھی طرح جائز نہیں ٹھکرائی جا سکتی ہے۔
اسپیکر انتھونی ریڈن اور ایک دوسرے ممبر پارلیمنٹ نے کہا ہے کہ پورے امریکہ میں مینوفیکچرنگ کے شعبے میںکیلی فورنیا سب سے زیادہ روزگار پیدا کرتا ہے اور اناج کی پیداوار میں بھی آگے ہے۔ مسٹر ریڈن نے کہا ”اگر مسٹر ٹرمپ سوچتے ہیں کہ ہمارا ریاست کنٹرول سے باہر ہے تو میں مشورہ دوں گا کہ دوسری ریاست بھی ہماری طرح ہی ہونے چاہیے“۔ مسٹر ٹرمپ نے اس بل کی سخت مذمت کرتے ہوئے کہا ہے کہ اس سے جرائم کو فروغ ملے گا اور کئی معنوں میں کیلی فورنیا کنٹرول سے باہر ہو گیا ہے ۔

Read all Latest world news in Urdu at urdutahzeeb.com. Stay updated with us for Daily urdu news from world and more news in Urdu. Like and follow us on Facebook

Title: California is not out of control leaders tell trump in Urdu | In Category: دنیا World Urdu News

Leave a Reply