ایران میں داعش کے8دہشت گردوں کو پھانسی دے دی گئی

تہران: ایران نے کہاہے کہ اس نے 2017میں پارلیمنٹ اور تہران میں آیت اللہ روح اللہ خمینی کے مزار پر حملے میں ملوث داعش گروہ کے8دہشت گردوں کو پھانسی دے دی۔

7جون2017کو شیعہ ملک ایران کے اندر سنی انتہاپسندوں کا ابھی تک کا یہ واحد حملہ ہے۔ایران کے عدالتی خبر رساں ادارے میزان نے ہفتہ کو اپنے بلیٹن میں ان 8افراد کو پھانسی دینے کی تصدیق تو کی لیکن یہ وضاحت نہیں کی کہ کب اور کہاں انہیں پھانسی دی گئی۔واضح ہو کہ ایران میں پھانسی کی شکل میں سزائے موت دینے کا رواج ہے۔

میزان نے اپنی رپورٹ میں بتایا کہ ان 8افراد پر باقاعدہ مقدمہ چلایا گیا اور اس دوران عینی شاہدین کے حلفیہ بیانات لیے گئے اور واردات انجام دیتے ویڈیو فوٹیج بھی بغور دیکھے گئے۔میزان کے مطابق یہ آٹھوں اس واردات میں جس میں متعدد بے قصور ایرانی شہری ہلاک و زخمی ہوئے تھے۔

جن 8داعش انتہاپسندوں کو پھانسی دی گئی ان کی شناخت سلیمان مظفری، اسماعیل صوفی، رحمٰن بہروز، ماجد مرتضائی ،سیروس عزیزی، ایوب اسماعیلی ،خسرو رمضانی اور عثمان بہروز کے طور پر کی گئی ہے۔

Read all Latest world news in Urdu at urdutahzeeb.com. Stay updated with us for Daily urdu news from world and more news in Urdu. Like and follow us on Facebook

Title: Ayatollah khomeini shrine attack iran executes 8 in Urdu | In Category: دنیا World Urdu News

Leave a Reply