شام میں انتہا پسند گروپوں کی اندرونی لڑائی میں 300 افراد ہلاک

دمشق: شام کے دارالخلافہ دمشق کے قریب انتہا پسندوں کے ایک گڑھ پر کنٹرول کرنے کے لیے تکفیری گروپوں میں آپس میں ہی ٹھن گئی اور اس گروہی خونریز تصادم میں کم ا زکم300انتہاپسند ہلاک ہو گئے۔
حقوق انسانی کے ایک نگراں گروہ کے مطابق گذشتہ چند ہفتوں سے مشرقی غوطہ میں سعودی حمایت یافتہ جیش الاسلام نام کا انتہا پسند گروپ القاعدہ سے وابستہ النصرہ محاذ کی زیر قیادت فیلاق الرحمٰن اور جیش الفسطاط کے خلاف جنگ کر رہا ہے ۔
یہ تصادم اس وقت شروع ہوئے جب فیلاق الرحمٰن انتہا پسند گروہ نے جیش اسلام پر کئی حملے کیے۔نگراں گروپ کے سربراہ رامی عبد الرحمٰن نے کہا کہ خطہ میں 28اپریل سے چل رہی جنگ میں اب تک 300سے زائد افراد مارے جا چکے ہیں۔

Title: at least 300 militants killed in infighting near damascus | In Category: دنیا  ( world )

Leave a Reply