کابل میں فوجی اسپتال پر داعش کے دہشت پسندوں کا حملہ،30ہلاک60زخمی

کابل:افغانستان کے دارالحکومت کابل میں امریکی سفارت خانے کے نزدیک واقع فوج کے اسپتال میں آج دہشت گردوں نے زبردست حملہ کر دیا جس میں کم از کم 30افراد ہلاک اور60دیگر زخمی ہو گئے۔بتایا جاتا ہے کہ حملہ آور ڈاکٹروں کے بھیس مین اسپتال میں داخل ہوئے اور اسپتال کے اندر موجود فوجیوں سے کئی گھنٹے تک مقابلہ کرتے رہے۔
حملہ400بستروں والے سردار محمد داؤد خان اسپتال کے عقبی دروازے پر خود کش دھماکہ سے شروع ہوا ۔خود کش بمبار نے جیسے ہی خود کو اڑایا خود کار رائفلوں اور دستی بموں سے لیس تین حملہ آور کمپلکس میں داخل ہو گئے۔ دولت اسلامیہ فی العراق و الشام (داعش) نے اس حملے کی ذمہ داری قبول کر لی ہے۔ ایک عینی شاہد کے مطابق سکیورٹی دستوں نے محمد دور خان اسپتال کو چاروں طرف سے گھیر لیا ہے۔
یہاں کچھ دیر پہلے دھماکے ہوئے تھے۔ اسپتال میں کام کرنے والے ایک ملازم عبدالقادر نے بتایا کہ بڑی تعداد میں حملہ آور اسپتال کے اندر چھپے ہوئے ہیں۔ عبدالقادر نے کہا،”میں نے ڈاکٹر کا لباس پہنے ہوئے ایک شخص کو فائرنگ کرتے دیکھا۔گولی لگنے سے میری نظروں کے سامنے ایک مریض اور اسپتال کے ایک ملازم کی موت ہوگئی۔
وہ اے کے 47سے گولی چلارہا تھا،لیکن میں نے اسپتال میں دیگر جگہوں سے بھی فائرنگ کی آواز سنی۔ ٹولو نیوز ٹیلی ویژن نے اسپتال میں کام کررہے ایک ڈاکٹر کے حوالے سے بتایا کہ پہلے اسپتال میں دھماکے کئے گئے اور اس کے بعد فائرنگ کی گئی۔

Read all Latest world news in Urdu at urdutahzeeb.com. Stay updated with us for Daily urdu news from world and more news in Urdu. Like and follow us on Facebook

Title: At least 30 killed 60 injured as insurgents attack kabul military hospital in Urdu | In Category: دنیا World Urdu News

Leave a Reply