ترکی سے6000دہشت گرد شام میں داخل ہو چکے ہیں:شامی وزیر اطلاعات

دمشق:شام کے وزیر اطلاعات عمران الزوبی کے حوالے سے عربی زبان کے میڈیا اداروں نے خبر دی ہے کہ حالیہ دنوں میں تقریباً6ہزار دہشت گرد سرحد پار کر کے شام میں داخل ہو کر مختلف علاقوں میں پھیل گئے ہیں۔اپریل کے اواخر میں شامی وزیر اعظم وائل نادر الحلقی نے بھی یہ کہتے ہوئے کہ کئی فریق جنگ بندی کی کھلی خلاف ورزی کر رہے ہیں، انتباہ دیا تھاکہ5ہزار سے زائد انتہا پسندوں کی نئی کھیپ ترکی سے حلب اور ادلب صوبوں میں داخل ہو چکے ہیں۔
شامی وزیر اعظم نے اس پر زور دیا کہ جنگ بندی معاہدہ کے برعکس ہورہا ہے ۔ دہشت گردانہ سرگرمیوں کا دائرہ وسیع اور دہشت گردوں کو مسلح کرنے کے لیے مدد بہم پہنچائی جا رہی ہے اورگذشتہ ہفتہ تک 5ہزار سے زیادہ ترک سرحد سے حلب اور اندلب صوبوں میں داخل ہو چکے ہیں۔
حلب میں رہائشی علاقوں پر جاری دہشت گرداننہ حملوں کے درمیان الزوبی نے یہ بات زور دے کر کہی کہ بے قصور شہریوں کے خلاف تکفیری انتہا پسندوں کی خونریز کارروائیوں کی ذمہ داری سعودی عرب اور ترکی پر عائد ہو تی ہے۔شامی وزیر اطلاعات نے مزید کہا کہ ترک اور سعودی کمانڈروں حلب میں شامی شہریوں اور فوجی اہلکاروں کو نشانہ بنانے کا حکم جاری کر دیا۔

Read all Latest world news in Urdu at urdutahzeeb.com. Stay updated with us for Daily urdu news from world and more news in Urdu. Like and follow us on Facebook

Title: around 6000 terrorists arrived in syria from turkey in recent days in Urdu | In Category: دنیا  ( world ) Urdu News
Tags: ,

Leave a Reply