ترکی نے عفرین کو النصرہ کے دہشت گردوں کے حوالے کرنے کا فیصلہ کی

تہران: ترک حکام نے عفرین کا چارج سنبھالنے کے لیے شمالی شام میں نقل مکانی کر جانے والے مشرقی غوطہ کے دہشت گردوں کے ساتھ ملاقاتیں شروع کر دیں۔ شام میںحقوق انسانی پر نظر رکھنے والے لندن کے ایک ادارے کے مطابق ترک حکام نے النصرہ سے وابستہ فیلق الرحمٰن کے کمانڈروں سے گذشتہ دس روز کے دوران عفرین خطہ کے حوالے سے متعدد میٹنگیں کیں ۔ ان میٹنگوں میں خطہ کی پولس کمان فیلق الرحمٰن کے سپرد کر دینے پر تبادلہ خیال کیا گیا۔شامی رصدگاہ برائے حقوق انسانی نے بتایا کہ ترک حکام کو اس بات کی بالکل صحیح معلومات ہیں کہ عفرین میں خاص طورسے مشرقی غوطہ سے کون داخل ہوا۔ ترکی نے مشرقی غوطہ سے نقل مکانی کرنے والے فیلق الرحمٰن کے700اراکین اور ان کے دس کمانڈروں کو عفرین میں بود وباش اختیار کرنے کے لیے بھیجا تھا۔اتوار کے روز ایک متعلقہ واقعہ میں صوبہ حلب میں عفرین خطہ میں ترک فوج اور ترک حمایت یافتہ انتہاپسندوں نے شہریوں کی ایک بڑی تعداد کو یرغمال بنا لیا اور ان کو آزاد کرنے کیے ان سے کثیر رقم کا مطالبہ کیا۔کرد زبان مین شائع ہونے والے اخبار حوار کے مطابق ترک فوجوں نے 20شہریوں کو ،جن میں زیادہ تر ایزدی ہیں،عفرین کے صحارہ علاقہ میں قسمی گاو¿ں میںگرفتار کر لیا۔اخبار نے مزید لکھا کہ انہوں نے گرفتار شدگان کو ایذائیں بھی پہنچائیں اور ان کا مال و اسباب بھی لوٹ لیا۔ترک فوج اور انتہا پسندوں نے ان یرغمالوں کو رہا کرنے کے عوض فی یرغمال ڈھائی تا پانچ ہزار ڈالر معاوضہ مانگا۔

Read all Latest world news in Urdu at urdutahzeeb.com. Stay updated with us for Daily urdu news from world and more news in Urdu. Like and follow us on Facebook

Title: Ankara to give afrins control to al nusra militants in Urdu | In Category: دنیا World Urdu News

Leave a Reply