حلب بمباری میں ایک ہی خاندان کے ہلاک 14 افراد میں شیر خوار بچے بھی شامل

بیروت: باغیوں کے زیر قبضہ حلب کو واپس لینے کی شامی حکومت کی کارروائی کے دوران فضائی حملے میں ایک ہی خاندان کے 14 افراد ہلاک ہوگئے۔حکومت شام کی اس مہم کو روس کی حمایت حاصل ہے۔ سول ڈیفنس کی طرف سے مرنے والوں کی جو فہرست شائع کی گئی ہے ان میں کئی شیرخوار بچے بھی ہیں جن میں دو بچے صرف چھ ہفتے کے ہیں جبکہ چھ دیگر بچوں کی عمر 8 سال یا اس سے کم ہے۔
سول ڈیفنس کے مطابق بمباری کرنے والے روسی جٹ طیارے تھے۔ سول ڈیفنس ایک راحت رساں ٹیم ہے جو شام کے باغیوں کے زیر قبضہ علاقے میں سرگرم ہیں۔ اس کے کارکن وہائٹ ہیلمیٹس کے نام سے مشہور ہیں۔
پچھلے مہینے روس اور امریکہ کی کوششوں سے کے صلاح کے ختم ہونے کے بعد باغیوں کے زیر قبضہ مشرقی حلب کو واپس لینےکی روس کی حمایت یافتہ شامی مہم کے دوران اب تک سینکڑوں افراد ہلاک ہوچکے ہیں۔
انسانی حقوق کی شامی تنظیم کا کہنا ہے کہ اس نے اس دوران حلب میں فضائی حملوں میں 448 افراد کی ہلاکتوں کی تفصیلات حاصل کی ہیں جن میں 82 بچے شامل ہیں۔ دوسری طرف شام اور روسی فوجوں کا کہنا ہے کہ وہ صرف جنگجوؤں کو نشانہ بناتی ہیں۔

Read all Latest world news in Urdu at urdutahzeeb.com. Stay updated with us for Daily urdu news from world and more news in Urdu. Like and follow us on Facebook

Title: Aleppo bombing kills 14 members of one family in Urdu | In Category: دنیا World Urdu News

Leave a Reply