مختلف افغان صوبوں میں سلامتی دستوں کی زمینی و فضائی کارروائی میں 92طالبان ہلاک15گرفتار

کابل: افغانستان کے سلامتی دستوں اور فضائیہ نے گذشتہ24گھنٹے کے دوران بلخ، جنوب مشرقی غزنی ، فریاب،پکٹیکا اور فراہ صوبوں کے مختلف ڈسٹرکٹس میں زبردست زمینی و فضائی کارروائی کی جس میں کم و بیش92طالبان ہلاک اور15گرفتار ہو گئے۔

شمالی بلخ میں کئی فضائی حملوں اورزمینی تصادموں میں کم از کم12طالبان ہلاک ہو گئے۔209ویں شاہین کورپس نے بتایا کہ سلامتی دستوں نے کہنہ چمتال ڈسٹرکٹ میں بدھ کو شام سات بجے طالبان کے ایک اجتماع کو نشانہ بنا کر فضائی کاروائی کی۔

بیان میں مزید کہا گیا کہ سلامتی دستوں کا بلخ صوبہ کے بلخ شہر میں طالبان انتہاپسندوں سے تصادم ہوا جس میں12طالبان مارے گئے۔غزنی صوبہ کے جنوب مشرق میں بھی یکے بعد دیگرے کئی فضائی حملے کیے گئے جس میں کم از کم42طالبان ہلاک اور دھماکہ خیز مواد سے بھری دو گاڑیاں تباہ ہو گئیں۔

203 ویں تھنڈر کورپس نے ایک بیا ن میں کہا کہ سلامتی دستوں نے صوبہ کے آب بند ڈسٹرکٹ میں کئی فضائی حملے کیے۔

بیان میں مزید بتایا گیا کہ ان42ہلاک شدگان میں طالبان کا ایک کلیدی کمانڈر ملا ظفر عرف کوچی بھی شامل ہے۔علاوہ ازیں تھنڈر کور پس نے مزید بتایا کہ افغان اسپیشل فورسز نے غزنی صوبہ کے آندار اور وغیز ڈسٹرکٹس میں کارروائیوں کے دوران 26 اور غزنی صوبہ کے ہی دیہ یاک ڈسٹرکٹ میں8طالبان انتہاپسند ہلاک ہو گئے۔

بیان میںمزید کہا گیا کہ ایک دشک بھاری مشین گن سمیت کچھ اسلحہ بھی تباہ کر دیا گیا۔افغان فوجی اہلکاروں کے مطابق بدھ کے روز ہی افغان اسپیشل فورسز نے صوبہ پکٹیکا کے خوش مند ڈسٹرکٹ،فراہ صوبہ کے فراہ شہر ،غزنی صوبہ کے گیرو ڈسٹرکٹ اور فریاب صوبہ کے المار ڈسٹرکٹ میں کارروائیاں کیں۔جس میں4طالبان ہلاک ہو گئے جبکہ 15گرفتار کر لیے گئے۔

Read all Latest world news in Urdu at urdutahzeeb.com. Stay updated with us for Daily urdu news from world and more news in Urdu. Like and follow us on Facebook

Title: Airstrikes armed clashes leave kill 92 taliban militants in Urdu | In Category: دنیا World Urdu News
What do you think? Write Your Comment

Leave a Reply

Your email address will not be published.