افغان صدر کی عید الاضحےٰ کے موقع پر پاکستان کو جامع مذاکرات کی پیش کش

کابل: امریکہ کی بدلی ہوئی افغان پالیسی اور دہشت گردی کے حوالے سے بین سرحدی کشیدگی کے ماحول میں افغانستان کے صدر اشرف غنی نے عید الاضحیٰ کے موقع پر پاکستان کو ‘جامع مذاکرات’ کی پیشکش کی ہے۔ یاد رہے کہ افغانستان کی طرف سے جہاں اکثر و بیشتر پاکستان پر دہشت گردوں کی پشت پناہی کے الزامات عائد کیے جاتے ہیں، وہیں پاکستان اپنے یہاں دہشت گردانہ کاروائیوں کے لئے مبینہ طور پر افغانستان میں چھپے دہشت گرد کو مورد الزام ٹھہراتا ہے۔ افغانستان کے تعلق سے اسی سال جون میں کابل میں ایک بین الاقوامی امن کانفرنس میں بھی اشرف غنی نے پاکستان کو تنقید کا نشانہ بناتے ہوئے کہا تھا کہ اس نے ان کے ملک کے خلاف ’غیر اعلانیہ جنگ‘ مسلط کر رکھی ہے۔دونوں ملکوں کے درمیان برطانیہ کی بنائی ہوئی تقریباً ایک صدی پرانی ‘ڈیورنڈ لائن’ سرحدبھی پاکستان اور افغانستان کے درمیان تنازعہ کا باعث ہے۔ گذشتہ کئی برسوں سے شورش زدہ افغانستان ،جہاں افغان فورسز کی معاونت اور تربیت کے لیے امریکی اور اتحادی ناٹو افواج بھی موجود ہیں، افغان طالبان اور داعش کی کارروائیوں سے متاثر ہے،۔ واضح رہے کہ حال ہی میں نئی پالیسی کے تحت امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ نے پاکستان پر دہشت گردوں کو محفوظ ٹھکانے فراہم کرنے کا الزام لگاتے ہوئے افغانستان میں مزید ہزاروں امریکی فوجیوں کی تعیناتی کی راہ ہموار کردی تھی۔

Read all Latest world news in Urdu at urdutahzeeb.com. Stay updated with us for Daily urdu news from world and more news in Urdu. Like and follow us on Facebook

Title: Afghanistan president ashraf ghani reaches out to pakistan offers comprehensive negotiations in Urdu | In Category: دنیا World Urdu News

Leave a Reply