افغان صدر اشرف غنی نے 11حقانی دہشت گردوں کے موت کے پروانے پر دستخط کر دیے

کابل:گزشتہ روز افغانستان کے دارالحکومت کابل میں ہونے والے اس سال کے بدترین دہشت گردانہ حملے کے بعد ،جس میں80سے زائد افراد ہلاک اور سیکڑوں زخمی ہو گئے،نہایت سخت رویہ اتیار کرتے ہوئے صدر اشرف غنی نے جیلوں میںسزائے موت کے منتظر حقانی نیٹ ورک کے 11طالبان دہشت گرد قیدیوں کو پھانسی دینے کے حکمنانہ پر دستخط کر دیے۔
البتہ طالبان نے اس حملے کے بعد اس کی مذمت کرتے ہوئے طالبان کے اس دھماکے میں ملوث ہونے کے امکان کو رد کر دیا تھا اور بعض ذرائع نے دعوی کیا ہے کہ اس حملے کی ذمہ داری دہشت گرد تنظیم داعش نے قبول کی ہے۔ لیکن وزارت داخلہ کے ترجمان صدیق صدیقی نے کہا ہے کہ ہلاکت خیز کابل بم دھماکے میں پاکستان کی آئی ایس آئی اور حقانی نیٹ ورک کا ہاتھ ہونا ثابت ہو گیا ہے۔ انہوں نے انڈیا ٹوڈے سےایک خصوصی ملاقات میں بتایا کہ کابل کے دھماکے میں اپاکستان کی آئی ایس آئی کا رول ہونا ثابت ہو گیا ہے ۔
انہوں نے ملک میں اس قسم کے مزید ہلاکت خیز حملوں کے خدشہ کا اظہار کرتے ہوئے مزید کہا کہ افغانستان امید کرتا ہے کہ پاکستان حقانی نیٹ ورک کے خلاف کارروائی کرے گا۔ اس حملے کے صرف ایک دن بعد ہی افغانستان کی قومی سلامتی کے ادارے نے ٹوئٹ کے ذریعے طالبان کے حقانی نیٹ ورک کو اس حملے میں ملوث ہونے کا الزام لگایا تھا ۔

Read all Latest world news in Urdu at urdutahzeeb.com. Stay updated with us for Daily urdu news from world and more news in Urdu. Like and follow us on Facebook

Title: Afghanistan president ashraf ghani orders execution of 11 haqqani taliban terrorists in Urdu | In Category: دنیا World Urdu News

Leave a Reply