طالبان نے امریکہ کے ساتھ امن مذاکرات منسوخ کر دیے

پشاور: افغان طالبان نے اعلان کیا ہے کہ اس ہفتہ قطر کے داارالخلافہ دوحہ میں امریکی حکام کے ساتھ جو مذاکرات ہونے والے تھے ایجنڈے ، خاص طور پر مذاکرات میں افغان حکام کی شرکت، ممکنہ فائر بندی اور قیدیوں کے تبادلے پر اختلافات کے باعث تنظیم نے انہیں منسوخ کر دیا ہے۔یہ دوروزہ امن مذاکرات آج یعنی بدھ کے روز سے شروع ہونے تھے لیکن اسلام پسند انتہا پسند گروپ نے کٹھ پتلی افغان اہلکاروں کو مذاکرات میں حصہ لینے کا اجازت دینے سے انکار کر دیا۔امریکی سفیر متعین افغانستان جان باس نےٹوئیٹ کر کے بتایاکہ امریکہ ۔طالبان مذاکرات کے حوالے سے جاری رپورٹیں غلط ہیں ۔ افغان دارالخلافہ کابل میں امریکی سفارت خانہ سے ایک علیحدہ ٹوئیٹ میں کہا گیا کہ ٹکراو¿ دور کرنے کے لیے افغان گروپوں کے درمیان مذاکرات نہایت ضروری ہی نہیںبلکہ لازمی ہیں۔بعد ازاں امریکی وزارت خارجہ نے اعلان کیا کہ افغان مفاہمت کے لیے امریکی خصوصی ایلچی زلمے خلیل زاد ہندوستان، چین ،افغانستان اور پاکستان کا دورہ کریں گے۔اور افغانستان میں سیاسی تصفیہ کی راہ ہموار کرنے کے لیے چاروں ممالک کے سرکاری حکام سے ملاقات کریںگے۔

Read all Latest world news in Urdu at urdutahzeeb.com. Stay updated with us for Daily urdu news from world and more news in Urdu. Like and follow us on Facebook

Title: Afghan taliban cancel peace talks with us in Urdu | In Category: دنیا World Urdu News
What do you think? Write Your Comment