ہوائی کی عدالت نے بھی مسلم ملکوں کے شہریوں پرپابندی کے ٹرمپ فرمان پر حکم امتناعی جاری کر دیا

ہوائی: امریکہ کے صدر ڈونالڈ ٹرمپ کو اس وقت ایک اور ہزیمت اٹھانا پڑی جب امریکی ریاست ہوائی کی ایک وفاقی عدالت نے ان کے اس فرمان پر ، جس کی رو سے 6مسلم ملکوں کے شہریوں اور پناہ گزینوں پر امریکی سرحدیں بند کردی گئی تھیں، عمل آوری روک دی۔امریکی وفاقی جج ڈیرک واٹسن نے فیصلہ دیا کہ ہوائی ریاست کافی غور و خوض کے بعد اس نتیجہ پر پہنچی ہے کہ اس حکم سے ناقابل تلافی دو ررس منفی نتائج مرتب ہوں گے۔واضح رہے کہ اس سے قبل ہونو لولو کی عدالت بھی اس سفری پابندی پر عمل آوری کو روک چکی ہے۔
جو ان تین ریاستوں میں پہلی ریاست تھی جہاں اس حکمنامہ کو چیلنج کیا گیا ہے۔ واشنگٹن اور مے لینڈ کی وفاقی عدالتوں سے بھی فیصلہ نصف شب تک آجانا متوقع ہے۔ہوائی عدالت نے فرمان کی اس دفعہ 6پر بھی عمل درآمد روک دیا جس کی رو سے امریکہ میں پناہ گزینوں کے داخلے پر چار ماہ کے لیے پابندی عائد کر دی گئی تھی۔ ہوائی کے وفاقی جج ڈیری واٹسن نے نئی ہدایت پر روک لگاتے ہوئے کہا کہ اس ہدایت سے امریکی آئین کی مسلمانوں کے خلاف امتیازی سلوک اور ان کی حفاظت کے قوانین کی خلاف ورزی ہوگی۔
صدر اور عدالت کے درمیان جاری یہ جنگ اب فیڈرل کورٹ جا سکتی ہے۔ صدر ٹرمپ نے اس سے پہلے اس سال جنوری میں بھی سفر سے متعلق اسی طرح کی ہدایت جاری کی تھی جس پر سیئٹل کے ایک جج نے روک لگا دی تھی۔ صدر ٹرمپ مسلمانوں کی اکثریت آبادی والے چھ ممالک کے شہریوں کے امریکہ آنے پر 90 دن کی پابندی لگانا چاہتے ہیں۔ اس کے علاوہ وہ پناہ گزینوں پر بھی 120 دن کے لئے پابندی لگانا چاہتے ہیں۔ صدر کا کہنا ہے کہ ان پابندیوں سے دہشت گردوں کو امریکہ میں گھسنے سے روکا جا سکے گا لیکن ہدایت پر روک لگانے والے فریقین کا خیال ہے کہ اس سے نسلی تفریق کو فروغ ملے گا۔

Read all Latest world news in Urdu at urdutahzeeb.com. Stay updated with us for Daily urdu news from world and more news in Urdu. Like and follow us on Facebook

Title: A judge in hawaii just blocked trumps revamped immigration order in Urdu | In Category: دنیا World Urdu News

Leave a Reply