افغانستان میں داعش خراسان کے چار بڑے لیڈران سمیت31انتہاپسند ہلاک

کابل: افغانستان کے مشرقی صوبہ ننگر ہار میں فضائی کارروائی کے دوران دولت اسلامیہ فی العراق و الشام خراسان( داعش -کے) کے 4مقامی لیڈر ہلاک ہو گئے۔

باخبر عسکری ذرائع کے مطابق داعش-کے یہ چار بڑے لیڈران اس فضائی حملے میں ہلاک ہوئے جو گذشتہ24گھنٹے کے دوران اچین، پچیر اگام اور خوگیانی اضلاع میں کی گئی تھی۔ مجموعی طور پر دیکھا جائے تو گذشتہ48گھنٹے کے دوران ان چار داعش لیڈروں سمیت 31طالبان انتہاپسند ہلاک ہوئے ہیں۔

ذرائع نے گذشتہ 24گھنٹے کے دوران کی گئی کارروائیوں کے دوران ہلاکتوں کے حولے سے کہا کہ داعش خراسان کے جو چار بڑے لیڈران ہلاک ہوئے ہیںا ن میں سے لیڈر خوگیانی ضلع میں مارے گئے ۔

جبکہ گذشتہ 48گھنٹے کے دوران جو 27دیگر انتہاپسند ہلاک ہوئے ان میں اروزگان صوبہ کے ترین کوٹ ضلع میں 7،نہر سراج اور سانگا اضلاع میں9، صوبہ قندھار میں5اور ننگر ہارمیں6 مارے گئے۔

حکومت مخالف مسلح انتہاپسندوںبشمول داعش خراسان کے ہمدردان نے ان فضائی حملوں کی کوئی تصدیق یا تردید نہیں کی ہے۔

ننگر ہار مشرقی افغانستان کے نسبتاً پر سکون صوبوں میں سے ایک ہے۔لیکن اس کے کچھ دور افتادہ علاقوں میں حکومت مخالف مسلح عناصر سرگرم ہیں اور حکومت اور سلامتی دستوں کے عملہ پر آئے روز حملہ کرتے رہتے ہیں۔

Read all Latest world news in Urdu at urdutahzeeb.com. Stay updated with us for Daily urdu news from world and more news in Urdu. Like and follow us on Facebook

Title: 4 isis k leaders killed in separate airstrikes conducted in nangarhar province in Urdu | In Category: دنیا World Urdu News
What do you think? Write Your Comment

Leave a Reply

Your email address will not be published.