امریکہ میں مسجد سے گھر جارہی ایک دوشیزہ کو پیٹ پیٹ کر ہلاک کرد یا گیا، لاش تالاب میں پڑی ملی

واشنگٹن:امریکہ کے صدارتی انتخابات میں ڈونالڈ ٹرمپ کی جیت کے بعد سے مسلمانوں پر جان لیوا حملوں کے واقعات میں جس تیزی سے اضافہ ہوا ہے اس کا تازہ ترین ثبوت ورجینیا میں ہوئے اس انسانیت سوز واقعہ سے ہو جاتا ہے جس میں ایک بے قصور مسلم لڑکی کو جس اپنے ساتھیوں کے ساتھ نماز پڑھ کر مسجد سے گھر جارہی تھی، سر راہ روک کر اس بری طرح زدو کوب کیا گیا کہ اس کی موقع پر ہی موت ہو گئی ۔ حملہ آوروں نے اس کی لاش ایک تالاب میں پھینک دی جسے تلاش بسیار کے بعد پولس نے برآمد کیا ۔پولیس ترجمان کے مطابق مقتولہ ،جس کا نام نبرہ حسنین تھا اور ریسٹن کی رہائشی تھی، اور ان کی چند سہیلیوں کا عبادت کے بعد مسجد سے باہر نکلتے ہوئے اسٹیرلنگ میں ایک کار سوار سے جھگڑا ہوگیا تھا۔ کار سوار نے جھگڑے کے دوران لڑکیوں کو تشدد کا نشانہ بنایا۔
اس لڑکی کی سہیلیوں نے جو کار سوار کے حملہ کرنے کے بعد گھبرا کر بھاگ کھڑی ہوئی تھیں، پولیس کو بتایا کہ اس لڑائی کے بعد وہ نبرہ کو تلاش کرتی رہیں لیکن وہ لاپتہ ہوگئی تھی۔ یہ اطلاع ملتے ہی پولس نے اس کی تلاش اور مشتبہ کی گرفتاری کی مہم چلا دی۔ کئی گھنٹوں تک تلاش کرنے بعد سہ پہر تین بجے ایک تالاب سے برآمد ہوئی۔پولیس ترجمان کے مطابق واقعے کے بعد پورے علاقے کو سیل کردیا گیا تھا اور اس کار سوار کی تلاش کے دوران ڈارون مارٹیز نام کے ایک نوجوان کو گرفتار کیا گیا ہے جو علاقے میں مشتبہ انداز میں گاڑی چلاتے ہوئے پایا گیا ہے۔نبرہ رمضان کے آخری عشرے کے دوران کی جانے والی عبادت کے لیے روزانہ اپی سہیلیوں کے ساتھ مسجد آتی تھی۔اور اس روز بھی وہ آل دولیس ایریا مسلم سوسائٹی مسجد آئی تھی۔
واضح رہے کہ گذشتہ ماہ امریکی اسلامی تعلقات کونسل کی جانب سے جاری ہونے والی رپورٹ کے مطابق امریکہ میں مسلمانوں پر تشدد کے واقعات میں 57فیصد کااضافہ ہوا ہے۔ رپورٹ کے مطابق مسلمانوں پر تشدد کے واقعات میں اضافہ ڈونلڈ ٹرمپ کے صدارتی الیکشن میں جیت کے بعد سے ہوا ہے۔ جس کی اصل وجہ ڈونلڈ ٹرمپ کی مسلمان پناہ گزینوں کے خلاف پالیسی ہے۔

Read all Latest world news in Urdu at urdutahzeeb.com. Stay updated with us for Daily urdu news from world and more news in Urdu. Like and follow us on Facebook

Title: 17 year old muslim girl abducted and killed on way home from virginia mosque in Urdu | In Category: دنیا World Urdu News

Leave a Reply