ایشز سریز کے پہلے ٹیسٹ میچ میں انگلستان نے4وکٹ پر196رنز بنائے

برسبن : ایشز سریز کے پہلے ٹیسٹ کے پہلے روز انگلینڈ نے پہلے بیٹنگ کرتے ہوئے چار وکٹ کے نقصان پر 196رنز بنا لیے۔خراب روشنی کے باعث 9.7اوور پہلے ہی کھیل ختم کرنے کا اعلان کر دیا گیا۔سر زمین آسٹریلیا پر پہلی بار انگلینڈ کی قیادت کرتے ہوئے جو روٹ نے ٹاس جیت کر پہلے بیٹنگ کا فیصلہ کیا لیکن اننگز کے تیسرے اوور میںہی سابق کپتان ایلسٹر کک فاسٹبولر مچل اسٹارک کی گیند پر ؤٹ ہوگئے۔ وہ 10گیندوں پر صرف 2رنز ہی بنا سکے ۔
جس وقت کک آؤٹ ہوئے تو ٹیم کا اسکوربھی دورنز ہی تھا۔لیکن دوسرے افتتاحی بلے باز اسٹون مین نے وینس کے ساتھ دوسرے وکٹ کے لیے 125رنز کی پارٹنر شپ کر کے روٹ کے فیصلے کی لاج رکھ لی۔ 127کے مجموعی اسکور پر اسٹون مین بھی آؤٹ ہو گئے انہیں فاسٹ بولر کمنز نے کلین بولڈ کیا۔لیکن اس وقت تک وہ سنچری پارٹنر شپ کرنے کے ساتھ ساتھ اپنی ہاف سنچری بھی مکمل کر چکے تھے۔ انہوں نے159گیندوں پر3چوکوں کی مدد سے53رنز بنائے۔
وینس جو روت کے ساتھ مل کر تیسرے وکٹ کے لیے 19رنز ہی بنا سکے تھے کہ لیون نے انہیں عین اس وقت رن آؤٹ کر دیا جب وہ پہلی ٹیسٹ سنچری سے صرف17رنز دور تھے۔ انہوں نے 12چوکوں کی مدد سے83رنز بناکر اپنی پہلی ٹیسٹ ہاف سنچری بنائی۔روٹ بھی زیادہ دیر تک کریز پر نہ ٹک سکے اور 15رنز کے انفرادیاسکور پر کمنز نے انہیں بھی ایل بی ڈبلیو آؤٹ کر دیا۔
انہوں نے 15رنز کے لیے50گیندیں کھیلیں اور صرفایک چوکا لگایا۔ پہلے روز کاکھیل ختم ہوا تو جے ملان 64گیندوں پر6چوکوں کے ساتھ 28اور معین علی 31گیندوںپر ایک چھکے کےساتھ 13رنز بنا کر غیر مفتوح پویلین واپس آئے۔ کمنز دو وکٹ لے کر آسٹریلیا کے کامیاب بولر رہے۔ اسٹارک کو ایک وکٹ ملی۔

Title: vince leads fight before australia hit back | In Category: کھیل  ( sports )

Leave a Reply