پاکستان میں انٹرنیشنل کرکٹ میچ کھیلا جانا اب بھی خطرے سے خالی نہیں

لاہور:پاکستان کرکٹ بورڈ (پی سی بی) جہاں ملک میں بین الاقوامی کرکٹ کو پھر سے بحال کرنے کی کوشش کر رہا ہے وہیں کھلاڑیوں کی بین الاقوامی یونین (فیکا ) نے کہا ہے کہ پاکستان میں میچ کرایا جانا اب بھی خطرے سے خالی نہیں ہے۔
فیکا کے چیف ایگزیکٹو ٹونی ایرش نے کہاکہ گزشتہ چند سالوں میں مختلف آزاد سیکورٹی مشیروں نے ہمیں مشورہ دیا ہے کہ پاکستان میں غیر ملکی ٹیموں اور کھلاڑیوں کو کھیلنے کے لئے بھیجنا کافی خطرناک ہے۔اگرچہ ہم پر اعتماد ہیں کہ پاکستان سپر لیگ (پی ایس ایل) اور پاکستان کرکٹ بورڈ (پی سی بی) موجودہ ماحول کو دیکھتے ہوئے ان کے بہتر تحفظ کے منصوبوں پر عمل درآمد کرے گا جو ہمارے مشیروں نے دئے تھے۔
انہوں نے کہاکہ فیکا کا یہ فرض ہے کہ وہ پی ایس ایل میں ان تمام کھلاڑیوں کو مشورہ مہیا کرائے جو ذاتی طور پر اس میں حصہ لے رہے ہیں یا نہیں لے رہے ہیں۔اب یہ کھلاڑی پر انحصار کرتا ہے کہ وہ اس مشورے کو مانتے ہیں یا نہیں۔ ایرش نے کہا کہ فیکا اس ٹورنامنٹ کی حفاظت کے لئے انتظام کی جانکاری مانگے گا۔
پی سی بی انڈین پریمیئر لیگ اور بگ بیش لیگ کی طرز پر پی ایس ایل کرائے گا جس کا انعقاد فروری اور مارچ میں متحدہ عرب امارات میں ہوگا اور اس کا فائنل مقابلہ پاکستان میں کرایا جائے گا۔

Read all Latest sports news in Urdu at urdutahzeeb.com. Stay updated with us for Daily urdu news from sports and more news in Urdu. Like and follow us on Facebook

Title: Travelling to pakistan still risky says fica in Urdu | In Category: کھیل Sports Urdu News

Leave a Reply