جنوبی افریقہ کو ہرا کر پاکستان نے سیمی فائنل کھیلنے کی امیدیں بر قراررکھیں

برمنگھم: پاکستان نے اپنے گیندبازوں کی اچھی کارکردگی کی بدولت جنوبی افریقہ کی مضبوط ٹیم کو بارش سے متاثرہ میچ میں ڈک ورتھ لوئیس قانون کے تحت 19 رنوں سے ہراکر آئی سی سی چیمپئنز ٹرافی کے سیمی فائنل میں داخل ہونے کی اپنی امیدیں برقرار رکھی ہیں۔ ہندستان سے ملی 124 رنوں کی زبردست شکست کے بعد پاکستان نے شاندار کھیل کا مظاہرہ کرتے ہوئے گروپ بی کے مقابلے میں جنوبی افریقہ کی ٹیم کو چونکا دیا۔ جبکہ اس میچ میں جنوبی افریقہ کو جیت کا دعویدار مانا جارہا تھا لیکن پاکستانی گیندبازوں نے جنوبی افریقہ کو 8 وکٹ پر 219 رنوں کے معمولی اسکور پر روک دیا تھا۔ رنوں کے ہدف کا تعاقب کرتے ہوئے پاکستانی ٹیم نے 27 اووروں میں تین وکٹ پر 119 رن بنائے تھے لیکن بارش کی وجہ سے کھیل نہیں ہوسکا۔ بدھ کی رات گئے امپائروں نے میچ ختم کرنے کا اعلان کردیا اور پاکستان نے ڈک ورتھ ضابطے کے تحت یہ میچ جیت لیا۔ڈک ورتھ لوئس فارمولے کے مطابق 27 اووروں میں ہدف 101 رن تھا جبکہ پاکستان 119 رن بنا چکا تھا۔ افتتاحی بلے باز فخر زمان (31)، بابر اعظمم (27ناٹ آؤٹ)، محمد حفیظ (26) اور شعیب ملک نے (ناٹ آؤٹ 16) رن بنائے تھے۔
مورن مورکیل نے سات اوور وں میں 18 رن دے کر تین وکٹ حاصل کئے۔ پاکستان کو اس فتح کے بعد دو پوائنٹ ملے۔ اس کی دو میچوں میں یہ پہلی جیت ہے جبکہ جنوبی افریقہ کی دو میچوں میں یہ پہلی شکست ہے۔ اپنے آخری میچوں میں پاکستان کو سری لنکا سے اور جنوبی افریقہ کو ہندستان سے کھیلنا ہے۔ سیمی فائنل میں پہنچنے کے لئے دونوں ٹیموں کو یہ میچ جیتنے ہونگے۔پاکستان کے گیندبازوں نے ہندستان سے شکست کھانے کے بعد شاندارکھیل کا مظاہرہ کرتے ہوئے جنوبی افریقہ کو 8 وکٹ کے نقصان پر 219 رنوں پر ہی سمیٹ دیا۔ ہندستان کے خلاف پاکستانی گیندبازوں کا کھیل کافی مایوس کن رہا تھا اور اس کے فیلڈروں نے کئی کیچ بھی چھوڑے تھے لیکن اس مقابلے میں نہ صرف پاکستانی ٹیم کی گیند بازی جارحانہ رہی بلکہ اس کے فیلڈروں نے بھی عمدہ کارکردگی کا مظاہرہ کیا۔
جنوبی افریقہ کے ڈیوڈ ملر نے 104 گیندوں میں ایک چوکا اور تین چھکوں کی بدولت ناٹ آؤٹ 75 رن بنائے۔ پاکستان کے تیز گیندباز حسن علی نے شاندار گیندباری کرتے ہویے 24 رن دے کر 3 وکٹ حاصل کئے جبکہ لیفٹ آرم اسپنر عماد وسیم نے نپی تلی گیندبازی کرتے ہوئے صرف 20 رن دیئے اور 2 وکٹ لے لئے۔ جنید خان نے 53 رنوں پر 2 وکٹ اور آف اسپنر محمد حفیظ نے 51 رن دے کر ایک وکٹ لیا۔ جنوبی افریقہ کا ٹاپ آرڈر پاکستان کی بہترین گیندبازی کے سامنے لڑکھڑا گیا اوراس نے 29 اووروں میں 118 رنوں پر اپنے چھ وکٹ گنوادیئے۔ملر کی نصف سنچری بیشک سب سے سست نصف سنچری رہی لیکن جنوبی افریقہ کی نازک حالت کو دیکھتے ہوئے یہ بہت اہم رہی۔ ملر نے کرس مورس کے ساتھ ساتویں وکٹ کی شراکت داری میں 47 رن جوڑے۔ مورس نے 45 گیندوں پر ایک چوکے کی مدد سے 28 رن بنائے۔ کیگیسو ربادا نے 23 گیندوں پر کارآمد 26 رن بنائے جس میں دو چوکے شامل ہیں۔ ٹاپ آرڈر میں کونٹن دی کاک (33)، ہاشم املہ (16) اور فاف ڈو پلیسس نے (26) رن بنائے۔ ا ے بی ڈیولیئرس بنا کھاتہ کھولے آؤٹ ہوگئے۔ ان کے کیرئر میں ایسا پہلی مرتبہ ہوا ہے جب وہ اپنی پہلی ہی گیند پر آؤٹ ہوکر گولڈن ڈک بناگئے۔

Read all Latest sports news in Urdu at urdutahzeeb.com. Stay updated with us for Daily urdu news from sports and more news in Urdu. Like and follow us on Facebook

Title: Pakistan shock south africa keep icc champions trophy semis hopes alive in Urdu | In Category: کھیل Sports Urdu News

Leave a Reply