دوسرا طلائی تمغہ جیت کر روس جوڈو مقابلوں کے میڈل جیتنے میں سرفہرست

ریو ڈی جنیرو:(یو این آئی) دواؤں کے استعمال کے تنازعہ اور کھلاڑیوں کی معطلی جھیلنے والے روس نے تمام روکاوٹوں کو پھلانگتے ہوئے ریو اولمپک میں اپنی بہترین کارکردگی جاری رکھی ہے اور یہاں کھسان کھلمورزا ئیف کے دوسرا طلائی تمغہ جیتنے کے ساتھ ہی وہ ریو اولمپک کے جوڈو مقابلوںمیں سب سے زیادہ میڈل حاصل کرنے والا ملک بن چکا ہے۔
یوروپی چمپئن کھاسن نے شاندار مظاہرہ کرتے ہوئے اپنے فائنل دو مقابلے ناک آؤٹ سے جیتے۔ سیمی فائنل میں انہوں نے متحدہ عرب امارات کے سرجیو ٹوما کو ہرایا جبکہ مردوں کے 81 کلوگرام زمرے کے فائنل میں امریکہ کے ٹریولس اسٹیوسن کو مات دے کر طلائی تمغہ اپنے نام کرلیا۔ چار سال قبل لندن اولمپک میں جوڈو میں تین طلائی اور کل 5 تمغے حاصل کرنے والے روس نے اتوار کو کانسہ کا تمغہ بھی لیا تھا۔ کھسان نے اسٹیونس کی تعریف کرتے ہوئے کہا کہ مجھے اپنے حریف کے بارے میں معلوم تھا کہ وہ کافی مضبوط ہے۔
اس لیے میں نے یہ طلائی تمغہ جیتنے کے لئے پورا زور لگادیا۔ ادھر نقرئی تمغہ حاصل کرنے والے اسٹیوسن کا جوڈو میں امریکہ کے لئے طلائی تمغہ جیتنے کا خواب ٹوٹ گیا۔ جاپان کے تاکانوری نگاسے نے ریو اولمپک کے جوڈو میں اپنے ملک کے لئے چھٹا کانسہ کا تمغہ جیتا۔ جبکہ وہ ابھی تک اپنی روایت کے خلاف جوڈو میں محض ایک ہی گولڈ میڈل جیت سکا ہے۔

Read all Latest sports news in Urdu at urdutahzeeb.com. Stay updated with us for Daily urdu news from sports and more news in Urdu. Like and follow us on Facebook

Title: Judo brings russia 3rd gold at rio olympics in Urdu | In Category: کھیل Sports Urdu News

Leave a Reply