بیرسٹو نے سنچری بنا کر انگلینڈکو 28سال بعد ورلڈ کپ کے سیمی فائنل میں پہنچا دیا

چیسٹر لی اسٹریٹ:لیگ اسپنر عادل رشید نے45ویں اوور کی آخری گیند پرجیسے ہی ٹرینٹ بولٹ کو وکٹ کیپر بٹلر کے ہاتھوں اسٹمپڈ آؤٹ کرایا پورا انگلینڈ خوشی سے جھوم اٹھا کیونکہ 28سال بعد انگلینڈ پہلی بار کسی ورلڈ کپ کرکٹ کے سیمی فائنل میں داخل ہوا تھا۔ اس سے قبل آخری بار اس نے 1992میں آسٹریلیا میں کھیلے گئے ورلڈ کپ کا وہ سیمی فائنل کھیلا تھا جس میں ڈک ورتھ لوئس فارمولے سے جنوبی افریقہ کو میچ جیتنے کے لیے ایک گیند پر22رنز کا ٹارگٹ دیا گیاتھا۔

306نز کے ہدف کے تعاقب میں نیوزی لینڈ عملاً میچ اسی وقت ہار گیا تھا جب محض 123رنز پر اس کی آدھی ٹیم پویلین لوٹ چکی تھی۔ اس کے بعد تو پوری ٹیم کے حوصلے انے پست ہو گئے کہ اس کے باقی بلے باز بس خانہ پری کرتے ہوئے 50اوور پورے ہونے یا اس سے پہلے آؤٹ کر دیے جانے کا ہی انتظار کرتے رہے۔ اور وہی ہوا ان کی اس بے دلی کے باعث ہی عادل رشید نے جس وقت بولٹ کی شکل میں نیوزی لینڈ کی آخری وکٹ گرائی تو ابھی5اوور باقی تھے اور ٹیم منزل سے 119رنز دور تھی ۔لیکن اس بڑے فرق سے ہارنے کے باوجود نیوزی لینڈ پاکستان بنگلہ دیش کے درمیان میچ کے نتیجہ سے پہلے ہی سیمی فائنل کھیلنے کی مستحق قرار دے دی گئی کیونکہ پاکستان کو نیوزی لینڈ کی سیمی فائنل میں رسائی روکنے کے لیے بنگلا دیش کو 316رنز کے فرق سے ہرانا ہے جو ناممکن ہے۔

خیر آمد م بر سر مطلب نیوزی لینڈ کی قلیل اسکور کی اننگز میں لیتھم ہی 65گیندوں پر پانچ چوکوں کی مدد سے57رنز بنا کر نمایاں رہے۔ جبکہ ٹیلرنے42بالوں پر دو چوکوں کی مدد سے28،کپتان ولیمسن نے 40گیندوں پر 3چوکوں کے ساتھ28اور نیشم نے 27گیندوں پر19رنز بنائے اور ایک چوکا لگایا۔ 6بلے باز بشمول گپٹل، نکولس اور ڈی گرینڈ ہوم دہائی کے ہندسہ تک میں نہیں پہنچ سکے۔انگلینڈ کی طرف سے مارک ووڈ نے تین وکٹ لیے جبکہ ووکس، آرچر،پلنکٹ اور عادل رشید کو ایک ایک وکٹ ملی۔ اس سے قبل تاس جیت کر پہلے بیٹنگ کرتے ہوئے انگلینڈ نے جانی بیرسٹو کی شاندار سنچری اور ساتھی افتتاحی بلے باز جیسن رائے کے ساتھ 123رنز کی اوپننگ پارٹنر شپ کی مدد سے مقررہ50اووروں میں305رنز بنائے۔ انگلینڈ کی پہلی وکٹ123مجموعے پر اس وقت آؤٹ ہوئی جب نیشم کی ایک سیدھی گیند کو اپنی جگہ کھڑے کھڑے کھیلنے کی کوشش میں رائے شارٹ کور میں لپک لیے گئے۔

رائے نے 61گیندوں پر 8چوکوں کی مدد سے60رنز بنائے۔ لیکن افتتاحی بلے باز وں کی اس مضبوط بنیاد پر بیرسٹو اور کپتان مورگن کے علاوہ کوئی بڑی اننگز نہیں کھیل سکا اور ٹیم بمشکل تمام 300کا ہندسہ پار کر سکی۔ بیرسٹو نے 99گینیں کھیلیں اور 106رنز میں 15چوکے اور ایک چھکا لگایا۔ مورگن نے 40گیندوں پر 5چوکوں کی مدد سے42اور جو روٹ نے 25گیندوں پر 24رنز بنائےا ور صرف ایک چوکا لگایا۔نیوزی لینڈ کی جانب سے بولٹ،ہنری اور نیشم نے دو دو اور سینٹنر اور ساو¿تھی نے ایک ایک وکٹ لی۔بیرسٹو کو مین آف دی میچ قرار دیا گیا۔

Read all Latest sports news in Urdu at urdutahzeeb.com. Stay updated with us for Daily urdu news from sports and more news in Urdu. Like and follow us on Facebook

Title: Jonny bairstow mark wood put england in semi finals in Urdu | In Category: کھیل Sports Urdu News
What do you think? Write Your Comment

Leave a Reply

Your email address will not be published.