ہندوستان جیت کا سلسلہ برقرار رکھنے کی کوشش کرے گا

کولمبو: وراٹ کوہلی کی کپتانی والی ہندوستانی کرکٹ ٹیم یک روزہ سیریز پر 3۔0 سے پہلے ہی قبضہ کرچکی ہے اور کھلاڑیوں کی چوٹوں اور ناقص کارکردگی کے لئے چوطرفہ تنقید کا نشانہ بننے والی سری لنکا کرکٹ ٹیم کے خلاف وہ جمعرات کو یہاں چوتھے ون ڈے میں بھی اپنی جیت کا سلسلہ قائم رکھنے اترے گی۔ ہندوستان نے ٹسٹ سیریز میں سری لنکا کے خلاف 3۔0 سے کلین سویپ کیا تھا اور اب وہ ون ڈے سیریز میں بھی کلین سوئپ والی کامیابی سے دو میچ دور ہے۔ دوسری طرف سری لنکاکی ٹیم تسلسل سے ملنے والی شکست کے باعث خود اعتمادی پیدا نہیں کر پا رہی ہے ۔ سری لنکا کے لئے اس سیریز میں کم سے کم دو میچ جیتنا 2019 کے عالمی کپ کے لئے کوالیفائی کرنے کے لحاظ سے بھی ضروری تھا لیکن وہ اپنے گھریلو میدان پر بھی اس مقصد کو پورا نہیں کرسکی۔ وہیں ٹیم انڈیا نے ون ڈے میں اپنی نوجوان بریگیڈ کے ساتھ بہترین کارکردگی کا مظاہرہ کرتے ہوئے جیت حاصل کی ہے۔ ہندوستان نے پلے کیل میں تیسرا ون ڈے چھ وکٹ سے جیتا تھا جہاں ایک بار پھر ’مسٹر فنیشر‘ سابق کپتان مہندر سنگھ دھونی نے سب سے شاباش حاصل کی۔ سیریز سے پہلے تک ٹیم میں اپنی جگہ کے لئے سوالوں میں گھرے دھونی نے ناٹ آو¿ٹ 67رن کی اننگز سے جیت میں تعاون دیا تو دوسرے ون ڈے میں بھی ان کی ناٹ آو¿ٹ 45 رن کی اننگز میچ کو فتح دلانے میں اہم رہی تھی۔ 36سالہ دھونی یقینی طور پر ٹیم کے تجربہ کار اور اہم کھلاڑی ہیں اور ان کی فارم نے ان پر سوال اٹھانے والوں کی زبان بند کردی ہے لیکن خود وکٹ کیپر بلے باز پر بھی بہتر کارکردگی برقرار رکھنے کا دباو ضرور ہے خاص طور پر ایسے وقت میں جب وہ کولمبو میں اپنے کیریئر کے 300 واں ون ڈے کھیلنے اتریں گے۔ ان سے اس میچ کو یادگار بنانے کے لئے بہترین کاکردگی کی امید کی جاسکتی ہے۔ گزشتہ کچھ میچوں میں وراٹ کے بلے بازی آرڈر میں کچھ تبدیلیوں کے لئے ان پر سوال اٹھے لیکن ٹیم کی جیت سے حوصلہ مند کپتان نے واضح کردیا کہ وہ اس طرح کا تجربہ جاری رکھیں گے تاکہ باقی کھلاڑیوں کو موقع مل سکے۔ انہوں نے کہا تھا کہ ٹیم میں سبھی 15 کھلاڑی میچ جیتنے کی صلاحیت رکھتے ہیں۔ حالانکہ تیسرے میچ کے لئے ٹیم میں کوئی تبدیلی نہیں کی گئی تھی لیکن اس سے پہلے کپتان نے خود کو بلے بازی آرڈر میں پانچویں مقام پر کھسکا دیا تھا۔ ویسے پہلے دانبولہ ون ڈے میں ناٹ آو¿ٹ 82 رن کی اننگز کے بعد سے پچھلے دو میچوں میں وراٹ نے 4 اور 3 رن کی مایوس کن اننگز کھیلی ہیں اور کولمبو میں وہ رن بنانے کی کوشش کریں گے۔ وراٹ کے علاوہ روہت شرما، شکھر دھون، لوکیش راہل اور مڈل آرڈر میں دھونی، ہاردک پانڈیا اور بھونیشور کمار اچھے کھلاڑی ہیں اور کسی بھی حالت میں ٹیم کو جیت تک لے جاسکتے ہیں۔

Read all Latest sports news in Urdu at urdutahzeeb.com. Stay updated with us for Daily urdu news from sports and more news in Urdu. Like and follow us on Facebook

Title: India vs sri lanka 4th odi in Urdu | In Category: کھیل Sports Urdu News

Leave a Reply