بنگلہ دیش کو ہرا کر ہندوستان نے ایشیا کپ پر قبضہ برقرار رکھا

دوبئی: ہندوستان نے ایک سنسنی خیز مقابلہ کے بعد بنگلہ دیش کو 3وکٹ سے شکست دے کر ایشیا کپ جیت لیا۔واضح ہو کہ یہ دوسرا موقع ہے جب فائنل میں پہنچ کر بھی بنگلہ دیش ہندوستان کو زیر نہیں کر سکا ۔

گذشتہ فائنل میں بھی جو آئی سی سی کی ہدایت پر ون ڈے انٹرنیشنل سے ٹونٹی ٹونٹی فارمیٹ کے تحت کھیلا گیا تھا بنگلہ دیشی چیتے اپنے گھر میں ”شیر بنگلہ نیشنل اسٹیڈیم میں ڈھیر ہو گئے تھے اور ہندوستان نے وہ مقابلہ8وکٹ سے جیتا تھا۔لیکن اس بار ہندوستان اور پاکستان کے درمیان سیاسی کشیدگی کے باعث ٹورنامنٹ ایک غیر جانبدار ملک متحدہ عرب امارات میں منتقل کردیے جانے کے باوجود بنگلہ دیش نے حوصلہ نہیں ہارا ۔

اور سوپر فور میں پاکستان کو پچھاڑ کر فائنل میں ہندستان کے لیے خطرے کی جو گھنٹی بجائی تھی اسے اس کے مڈل آرڈر بلے بازوں نے ہندوستان کے اسپن جال میں پھنس کر اعلان خود سپردگی میں بدل دیا۔ ورنہ افتتاحی بلے باز لنٹن داس نے شاندار سنچری بنا کر جو مضبوط پلیٹ فارم مہیا کیا تھا وہ طاقتور مڈل آرڈر کو دیکھتے ہوئے 300پلس اسکور کی نشاندہی کر رہا تھا۔

لیکن بنگلہ دیش کی پوری ٹیم 222رنز پر ہی سمٹ گئی ۔لیکن223ہدف کے تعاقب میں ہندوستان کو بھی پوری اننگز میں منزل تک پہنچنا آسان نہیں لگ رہا تھا کیونکہ 17ویں اوور میں 83اسکور پر کپتان روہت شرما کے آو¿ٹ ہوجانے کے بعد بنگلہ دیشی بولروں اور فیلڈرز نے ہندوستانیوں کا ایسا ناطقہ بند کیا کہ بہترین فنشر کا لقب پانے والے مہندر سنگھ دھونی سمیت پورا مڈل آرڈر منزل سے بہت پہلے ہتھیار ڈال گیا۔لیکن لوور مڈل آرڈر نے امیدی جگائے رکھیں ۔لیکن بنگلہ بولروں نے بھی مطلوبہ رن اوسط کم نہ ہونے دیا ۔

لیکن اس کے اسٹرائیک بولروں خاص طور پر مستفیض الرحمٰن، مشرف مرتضیٰ اور روبیل حسین اپنا کوٹہ مکمل کر چکے تھے لیکن آف اسپنر محمود اللہ نے بہترین بولنگ کا مظاہرہ کرتے ہوئے آخری اوور میں بھی اپنے اوسان بحال رکھے اور نوبت سوپر اوور یا پھر بنگلہ دیش کی جیت تک پہنچتی دکھائی دے رہی تھی لیکن آخری گیند پر جیت کا مطلوبہ رن لینے سے جو کہ لیگ بائی تھا بنگلہ دیشی فیلڈرز روک نہ سکے اور ہندوستان اعزاز کا دفاع کرنے میں کامیاب ہو گیا۔

لنٹن داس کو سنچری بنانے کے باعث مین آف دی میچ اور شیکھر دھون کو مین آف دی سریز قرار دیا گیا ۔ٹیم انڈیا کی طرف سے کپتان روہت شرما48رنز بنا کر نمایاں رہے جبکہ دنیش کارتک نے 37 ،دھونی نے 36، جڈیجہ نے 23،بھونیشور نے21اورکے ایک جادھو نے ناقابل شکست 23رنز بنائے ۔مستفیض اور روبیل نے دو دو محمود اللہ ، مشرف اور نجم نے ایک ایک وکٹ لی۔بنگلہ دیش کی جانب سے لنٹن داس 117گیندوں پر12چوکوں اور دو چھکوں کی مدد سے 121رنز بنا کر میچ میں سنچری بنانے والے واحد بلے باز بنے۔

Read all Latest sports news in Urdu at urdutahzeeb.com. Stay updated with us for Daily urdu news from sports and more news in Urdu. Like and follow us on Facebook

Title: Heroic kedar jadhav wins india title in last ball thriller in Urdu | In Category: کھیل Sports Urdu News
What do you think? Write Your Comment