انگلستان نے ٹیم انڈیا کو آخری ٹیسٹ میں بھی118رنز سے ہرا کر سریز 4-1سے جیت لی

لندن: افتتاحی بلے باز کے ایل راہل اور نوجوان وکٹ کیپر رشبھ پنت کی میڈن سنچری اور ان دونوں کے درمیان چھٹے وکٹ کے لیے ڈبل سنچری شراکت کے باوجود ہندوستان اس سریز کا اختتام اپنے شایان شان نہ کر سکا اور اس پانچویں اور آخری ٹیسٹ میچ میں 118رنز سے ہار کر سریز 4-1سے ہار گیا۔

حالانکہ ایک موقع پر راہل اور پنت نے امید کی کرن جگائی تھی اور چائے کے وقفہ کے دوران اگر چیف کوچ روی شاستری نے ٹیم منجمنٹ کے ساتھ بیٹھ کر یہ حکمت عملی وضع کر کے ان دونوں ان فارم بلے بازوں کو ہدایت دی ہوتی کہ سریز تو ویسے بھی ہار ہی چکے ہیں اس لیے اب3-1سے ہو یا 4-1کے فرق سے ہو بس کوشش یہ کی جائے کہ آخری دو گھنٹے میں کیے جانے والے31اووروں کے کھیل کو ٹونٹی ٹونٹی مقابلہ سمجھ کر تابڑ توڑ حملے شروع کر دیے جائیں ۔اور ایسا ہو بھی سکتا تھا کیونکہ انگلستان کے ایک خطرناک اور نہایت تجربہ کار فاسٹ بولرکرس براڈ زخمی ہونے کے باعث میدان سے باہر تھے اور ان کے مزید بولنگ کرنے کے دور دور تک کوئی آثار نہیں تھے۔

اور جب چائے کے وقفہ کے بعد کے پہلے ہی اوور میں رشبھ پنت نے لیگ اسپنر عادل رشید کی گیند پر چھکالگا کر اپنی سنچری مکمل کی تو ایسا لگ رہا تھا کہ ڈریسنگ روم میں یقیناً کوئی حکمت عملی وضع کی گئی ہے جس کا پنت نے اشارہ دیا ہے۔ لیکن راہل شاید اپنی اننگز کے150رنز پورے کرنے پر ہی توجہ مرکوز کیے تھے جس کے باعث تنہا رشبھ پنت کے بلے سے ہی لمبی ہٹیں لگائی جارہی تھیِ۔

راہل کا یہی دفاعی انداز ان کو150کا اور ٹیم کو جیت کے ہدف تک لے جانے کی راہ میں رکاوٹ بن گیا۔ کیونکہ وہ 149کے انفرادی اسکور پر عادل رشید کی شین وارن جیسی اس گیند کی طرح جس پر مائیک گیٹنگ بولڈ ہوئے تھے راہل بھی صاف بولڈ ہو گئے۔اور یہیں سے ٹیم انڈیا کی اننگز سمٹنا شروع ہو گئی جس سے واضح ہوگیا کہ چیف کوچ نے آخری دو گھنٹے کے کھیل کے لیے کوئی حکمت عملی نہیں بنائی تھی۔

کیونکہ راہل کے آو¿ٹ ہوجانے کے بعد باقی بلے باز 13اووروں میں ہی پویلین لوٹ آئے۔راہل نے224گیندوں پر 20چوکوں اور ایک چھکے کی مدد سے 149اور پنت نے 146گیندوں پر 15چوکوں اور چار چھکوں کی مدد سے 114رنز بنائے۔ رہانے 106گیندوںپر پانچ چوکوں کے ساتھ37رنز بنا کر تیسرے نمایاں بلے باز رہے۔ ٹیم انڈیا کے سات بلے بازدہائی کے ہندسہ تک میں نہیں پہنچ سکے۔ان میں سے بھی پانچ بلے بازوراٹ کوہلی، چتیشور پجارا، وہاری، محمد شامی اور بومرا تو کھاتہ تک نہ کھول سکے۔ایلسٹر کک کو مین آف دی میچ اور سیموئل کرن کو مین آف دی سریز قرار دیا گیا۔

Read all Latest sports news in Urdu at urdutahzeeb.com. Stay updated with us for Daily urdu news from sports and more news in Urdu. Like and follow us on Facebook

Title: England take series 4 1 in Urdu | In Category: کھیل Sports Urdu News

Leave a Reply