روہت، کوہلی اور بومرہ کی عمدہ کارکردگی کی مدد سے ہندوستان نے تین میچوں کی سریز 2-1سے جیت لی

کانپور:بڑے اسکور کے میچ میں جس میں دونوں ٹیموں نے صرف14وکٹ کے نقصان پر 668رنز بنائے ،ٹیم انڈیا نے نیوزی لینڈ کو 6 رنز سے شکست دے کر 3میچوں کی سریز 2-1سے جیت لی۔ 338رنز کے ہدف کے تعاقب میں نیوزی لینڈ نے 7وکٹ پر 331رنز بنائے۔کانپور کے گرین پارک میں کھیلے گئے میچ میں40ویں اوور تک پلڑا دونوں ٹیموں کے حق میں برابر رہنے کے بعد 41ویں اوور میں بومرہ کی پہلی ہی گیند پر، جو سلو اور آف کٹر تھی، روس ٹیلر کے اور پھر 48ویں اوو میں بومرہ کی ہی پانچویں گیند پر لیتھم کےرن آؤٹ ہوتے ہی میچ کا پلڑا ہندوستان کے حق میں تیزی کے ساتھ ایسا جھکنا شروع ہوا کہ وقفہ وقفہ سے وکٹیں گرنے سے نیوزی لینڈ کی ٹیم میچ میں واپس نہیں آسکی ۔
افتتاحی بلے باز گپتل کے جلد آؤٹ ہوجانے کے بعدمونرو اور ولیمسن نے اننگز کو سنبھالنا شروع کیااور دونوں اسکور کو 153تک لے گئے ۔لیکن اس سکور پر مونروکو لیفٹ آرم اسپنر چاہل نے فلائٹ سے چکمہ دے کر کلین بولڈ کر دیا۔مونرو نے 62گیندوں پر 8چوکوں اور تین چھکوں کی مدد سے 75رنز بنائے ۔ اور کپتان ولیمسن کے ساتھ دوسرے وکٹ کے لیے 109رنز بنائے۔ 15رنز کے اضافہ کے بعد ہی ولیمسن بھی چاہل کا شکار بن گئے۔ ان کی آف کٹر پر ہی چھکا لگانے کی کوشش میں وہ چوک گئے اور وکٹ کے پیچھے لپک لیے گئے۔ انہوں نے 84گیندوں پر8چوکوں کے ساتھ 64رنز بنائے۔
روس ٹیلر اور ٹم لیتھم نے ایک بار پھر عمدہ بلے بازی کا مظاہرہ کرتے ہوئے چوتھے وکٹ کے لیے 79رنز کی پارٹنر شپ کی۔ان دونوں نے اسکور 247رتک پہنچایا ہی تھا کہ ایک اور کامیاب بولر بومراہ نے ٹیلر کو سلوور بال پر کچھ ایسا گمراہ کیا کہ انہیں پوائنٹ پر کیدار جاڈھو نے کیچ آؤٹ کر کے نیوزی لینڈ کو زبردست جھٹکا دیا۔ٹیلر نے 47گیندوں پر تین چوکوں کی مدد سے39رنز بنائے۔لیتھم کو آل راؤنڈر نیکلس کی شکل میں ایک اچھا ساتھی ملا گیا اور یہ دونوں اسکور 306تک لے گئے۔تب کوہلی نے اب تک کے سب سے ناکام بولر بھونیشور کمار کو اٹیک پر لگایا اور انہوں نے 46ویں اوور کی پانچویں گیند پر نیکلس کو فل لینتھ گیند پر کلین بولڈ کر کے ٹیم کو میچ میں واپس لانے کی کوشش کی۔نیکل نے 24گیندوں پر پانچ چوکوں اور ایک چھکے کی مدد سے 37رنز بنائے۔ابھی کیوی ٹیم اس جھٹکے سے سنبھلی بھی نہیں تھی کہ بولرہ نے لیتھم کو رن آؤٹ کر کے ٹیم کو جیت کی خوشبو سونگھا دی۔
لیتھم 52گیندوں پعر 7چوکوں کی مدد سے65رنز بنا کر آؤٹ ہوئے۔ اس کے بد پھر کیوی ٹیم میچ میں واپس نہ آسکی۔ٹیم انڈیا کی طرف سے فاسٹ بولر جسپریت بومرہ 3وکٹ لے کرکامیاب بولر رہے۔ چاہل نے دو اور بھونیشور نے ایک وکٹ لی۔اس سے قبل ٹاس ہارنے کے بعد پہلے بیٹنگ کے لیے مدعو کیے جانے پر ٹیم انڈیا نے افتتاحی بلے باز روہت شرما اور کپتان وراٹ کوہلی کی سنچریوں اور ان دونوں کے درمیان دوسرے وکٹ کے لیے ڈبل سنچری پارٹنر شپ کی بدولت مقررہ50اووروں میں6وکٹ پر 337رنز بنائے۔اگرچہ ساتویں اوور کی پہلی ہی گیند پر جب فاسٹ بولر ساتھی نے29مجموعی ا اسکور پر شکھر دھون کو کپتان ولیمسن ہاتھوں مڈ آف پر کیچ آؤٹ کراکے ولیمسن کا فیصلہ درست قرار دیا۔ لیکن کپتان کوہلی اور روہت نے بائیں ہاتھ کے فاسٹ بولر بولٹ کو اصل نشانہ بناتے ہوئے تابڑ توڑ حملے کر کے اننگز کو نہ صرف لڑکھڑانے سے بچا یا بلکہ 230رنز کی پارٹنر شپ کر کے ٹیم کو 300کا ہندسہ پار کر نے کی راہ پر ڈال دیا۔ 259اسکور پرروہت138گیندوں پر 18چوکے اور 2چھکوں کی مدد سے147رنز بنا کر لیفٹ آرم اسپنر سینٹنر کے شکار ہو گئے۔
پانڈیا بھی کریز پر زیادہ دیر نہ رک سکے اور مجموعی اسکور14رنز کے اضافہ کے بعد 8رنز بنا کر سینٹنر کی ہی گیند پر آوٹ ہو گئے۔302اسکور پر کوہلی بھی106گیندوں پر 9چوکوں اور ایک چھکے کی مدد سے113رنز بنا کر ساؤتھی کی گیند پرآؤٹ ہو گئے۔مہندر سنگھ دھونی نے 17بالوں پر تین چوکوں کے ساتھ 25اور کیدار جاڈھو نے 10گیندوں پر 18رنز بنائے اور اس دوران ایک چوکا اور ایک چھکا لگایا۔سؤتھی، میلن اور سینٹنر نے دو دو وکٹ لیے۔روہت شرما کو مین آف دی میچ اور کپتان وراٹ کوہلی کو سریز کا بہترین کھلاڑی قرار دیا گیا۔

Title: bumrah kohli rohit keep indias streak going | In Category: کھیل  ( sports )

Leave a Reply