ہندوستان نے پاکستان کو ہرا کر ازلان شاہ ہاکی میں میڈل جیتنے کی امیدیں روشن رکھیں

اپوہ: ملیشیا کے شہر اپوہ میں کھیلے جارہے ازلان شاہ ہاکی ٹورنامنٹ میں مین آف دی میچ سنیل کے خوبصورت کھیل اور دو گول کی مدد سے ہندوستان کی ہاکی ٹیم نے روایتی حریف پاکستان کو ایک کے مقابلہ5 گول سے شکست دے کر ایک میڈل کے ساتھ وطن واپس آنے کی امیدیں زندہ رکھیں۔
2009سے پاکستان کے خلاف چار میچ جیتنے اور صرف ایک میچ ہارنے کے ریکارڈ کے ساتھ کھیلتے ہوئے ہندوستان نے چھٹے مقابلہ میں بھی میچ کا آغاز بڑے تابڑ توڑ حملوں سے کیا اور چوتھے منٹ میں ہی من پریت سنگھ نے بائیں فلینک سے ریورس ہٹ کر کے شاندار گول سے سب کو ششد رکر دیا۔لیکن ساتویں منٹ میں پاکستان نے اس وقت گول ادا کر دیا جب محمد عرفان نے ٹیم کو ملنے والے دوسرے پنالٹی کارنر کو گول میں بدلنے میں کوئی غلطی نہیں کی۔ لیکن1-1اسکور ہونے کے باوجود ہندوستان نے اپنے حملوں میں کمی نہیں آنے دی۔ بلکہ پہلے سے زیادہ تیز کر دیے۔اور گول برابر کیے جانے کے تین منٹ بعد ہی سنیل نے اپنا پہلا اور ٹیم کا دوسرا گول کر کے پھر سبقت دلادی۔ اس کے بعد ٹیم انڈیا نے اچانک ہی اپنی حکمت عملی بدلی اور چھوٹے چھوٹے پاس سے پاکستانی دفاع کو زبردست مشغول رکھا اور اس کے فارورڈوں اور ہاف کو حملے کرنے یا کوئی اسکیم بنانے کے لیے سوچنے کا موقع ہی نہیں دیا۔
اور اسی میں اس نے پہلا پنالٹی کارنر حاصل کر لیا لیکن گول کیپر عمران بٹ نے روپیندر سنگھ کو گول میں بدلنے والے زبردست شاٹ کو اتنی ہی خوبصورتی سے روک کر خطرہ ٹال دیا۔44ویں منٹ میں سنیل نے اپنا دوسرا اور ٹیم کا تیسراگول کر کے ہندوستان کی سبقت کچھ اور مضبوط کر دی۔ تیسرا گول ہوتے ہی پاکستانی کھلاڑیوں کے حوصلے ایسے پست ہوئے کہ پھر ہندوستانی کھلاڑیوں نے پیچھے مڑ کر نہیں دیکھا اور باقی وقت میں مزید دو گول کر کے میچ 5-1سے جیت لیا۔چوتھا گول تلویندر سنگھ نے اور پانچواں گول روپندر پال سنگھ نے پنالٹی کارنر پر کیا۔ اسکور 6-1ہو سکتا تھا لیکن 55ویں منٹ میں ملنے والے پنالٹی اسٹروک پر روپیندر پال کا شاٹ سیدھے گول کیپر کے دستانوں میں چلا گیا۔

Read all Latest sports news in Urdu at urdutahzeeb.com. Stay updated with us for Daily urdu news from sports and more news in Urdu. Like and follow us on Facebook

Title: Azlan shah hockey india thrash pakistan 5 1 in Urdu | In Category: کھیل Sports Urdu News

Leave a Reply