لارڈز میں پاکستان نے انگلستان کو 9وکٹ سے ہرا یا،عامر اور عباس کی تباہ کن بولنگ

لندن: فاسٹ بولروں محمد عامر اور محمد عباس کی تباہ کن بولنگ کی مد د سے پاکستان نے انگلستان کو لارڈز میں 9وکٹ سے شکست دے کر یہ بات یقینی بنا لی کہ وہ یہ دو ٹیسٹ میچوں کی سریز ہارے گا نہیں۔حالانکہ ٹیسٹ میچ کے تیسرے روز ہی انگلستان کے چھ وکٹ 110رنز پر آؤٹ کر کے پاکستان نے اننگز سے جیتنے کی راہ پکڑ لی تھی لیکن جوزبٹلر اور ڈوم بیس کے درمیان بتدریج خطرناک رخ اختیار کرنے والی ساتویں وکٹ کی رفاقت سے یہ اندیشے بھی سر ابھارنے لگے تھے کہ کہیں انگلستان ان دونوں کھلاڑیوں کی شراکت کا بھرپور فائدہ اٹھاتے ہوئے محفوظ نہیں بلکہ میچ وننگ پوزیشن میں نہ پہنچ جائے۔

لیکن چوتھے روز کا کھیل شروع ہوتے ہی محمد عباس اور محمد عامر نے 18گیندوں کے کھیل میں محض 6رنز کے عوض چار وکٹ لے کر لوور آرڈر کا صفایہ کر کے نہ صرف یہ خطرہ ٹال دیا بلکہ ہدف بھی اس قدر کم کر دیا کہ پاکستان کو اسے پار کرنے میں کوئی دقت پیش نہیں آئی اور اس نے 63رنز کا ہدف افتتاحی بلے باز اظہر علی کی وکٹ کے عوض پورا کر لیا۔ سہیل حارث نے 39اور امام الحق نے18رنز بنائے اور دونوں غیر مفتوح رہے۔

پاکستان کی 9وکٹ سے یہ جیت لگاتار دوروں میں لارڈز میں دوسری جیت ہے۔اس سے قبل 2016میں مصباح الحق کی قیادت میں پاکستان اسی میدان پر اننگلستان کو شکست دے چکا ہے۔لیکن دونوں جیت میں زمین آسمان کا فرق ہے کیونکہ اس ٹیم کے مقابلہ میں موجودہ ٹیم اور اس کا کپتان طفل مکتب اور حریف ٹیم کے مقابلے میں نہایت ناتجربہ کار ہے۔کیونکہ جتنے میچ پاکستان کی اس ٹیم کے موجودہ کھلاڑیوں نے مجموعی طور پر جتنے ٹیسٹ میچ کھیلے ہیں اتنے تو صرف اینڈڑسن اور براڈ نے کھیل لیے ہیں۔

اس سے قبل انگلستان پہلی اننگز میں179رنز کے خسارے کے ساتھ بیٹنگ کرتے ہوئے دوسری اننگز میں242رنز بنا کر آؤٹ ہوگیا۔پاکستان فاسٹ بولنگ کا جادو ایسا سر چڑھ کر بول رہا تھا کہ انگلستان کے سات بلے باز ڈبل فیگر میں پہنچنے سے پہلے ہی پاکستانی فاسٹ اٹیک کے آگے گھٹنے ٹیک کر آگئے۔کپتان جو روٹ120گیندوں پر 8چوکوں کی مدد سے 68رنز بنا کر نمایاں رہے۔جبکہ جوز بٹلر نے 138گیندوں پر6چوکوں کے ساتھ 67اور ڈوم بیس نے 106گیندوںپر 8چوکوں کے ساتھ 57رنز بنائے۔دونوں فاسٹ بولروں محمد عامر اور محمد عباس نے چار چار وکٹ لیے جبکہ لیگ اسپنر شاداب خان کو دو وکٹ ملے۔محمد عباس کو میچ میں 8وکٹ لینے پر مین آف دی میچ قرار دیا گیا۔

ایوارڈ لینے کے بعد انہوں نے اردو میں بات کرتے ہوئے کہا کہ کھچا کھچ بھرے لارڈ کے میدان میں انہوں نے میچ کے ایک ایک لمحے کا خوب لطف اٹھایا۔انہوں نے سریز سے کافی پہلے انہیں لسسٹر شائر بھیجنے پر پاکستان کرکٹ بورڈ سے اظہار تشکر کیااور کہا کہ اس سے انہیں انگلستان کے موسم سے ہم آہنگ ہونے کا موقع ملا۔محمد عباس نے یہ بھی کہا کہ گلین میک گرا اور محمد آصف ان کے آئیڈیل ہیں۔محمد آصف نے مجھے بہت کچھ سکھایا جس سے مجھے بہت فائدہ ہوا۔ محمد عباس کے مترجم کے فرائض وسیم اکرم نے انجام دیے۔

Read all Latest sports news in Urdu at urdutahzeeb.com. Stay updated with us for Daily urdu news from sports and more news in Urdu. Like and follow us on Facebook

Title: Another england collapse opens door for pakistans nine wicket rout in Urdu | In Category: کھیل Sports Urdu News

Leave a Reply