ماڈل ایمان سلیمان :’خواتین کو جنسی طور پر ہراساں کیا جاتا ہے اور پھر ثبوت مانگا جاتا ہے‘

نئی دہلی: پاکستان کی مشہور ومعروف ماڈل ایمان سلیمان نے اپنی انسٹاگرام پوسٹ میں ان تمام لوگوں کو تنقید کا نشانہ بنایا جو جنسی طور پر ہراساں کرنے والے افراد کا ساتھ دیتے ہیں اور ہراساں ہونے والوں سے ثبوت مانگتے ہیں۔

Eman Suleman wants us to stop calling alleged harassers 'innocent until proven guilty'

ماڈل ایمان سلیمان نے اپنی پوسٹ میں لکھا کہ ’زیادہ تر لوگ کہتے ہیںتب تک بے قصور جب تک جرم ثابت نہیں ہوتا، میں ان سے سوال کرتی ہوں ہم کس طرح ثابت کریں؟ ہم لوگوں کے سامنے کس طرح ثابت کریں کہ ہمارے ساتھ ایسا ہوا؟

Eman Suleman wants us to stop calling alleged harassers 'innocent until proven guilty'

ہمارے پاس ہمیں ہراساں کرنے والوں کے خلاف کیا ثبوت ہوگا؟ کچھ بھی نہیں، صرف یادیں ہیں، لیکن ہماری یہ یادیں اور ہمارے تجربات کی دنیا والوں کے سامنے کوئی اہمیت نہیں‘۔

Eman Suleman wants us to stop calling alleged harassers 'innocent until proven guilty'

ایمان نے مزید لکھا کہ ’ہمارے پاس ثبوت نہیں، تو ہم بے قصور نہیں، تو قصور ہمارا ہی ہے، ہم جھوٹے الزام لگا رہے ہیں؟

Eman Suleman wants us to stop calling alleged harassers 'innocent until proven guilty'

کیوں کہ ہمارے پاس ثبوت نہیں، کوئی کیمرا نہیں تھا، لوگ موجود نہیں تھے، اور اگر وہاں لوگ موجود بھی ہوتے تو جس آدمی نے ہمیں نامناسب انداز میں ہاتھ لگاکر ہراساں کیا وہ فوری وہاں سے ہجوم میں کہیں گم ہوجاتا ہے اور ہم کچھ نہیں کرپاتے‘۔

Eman Suleman wants us to stop calling alleged harassers 'innocent until proven guilty'

خیال رہے کہ ایمان سلیمان اس سے قبل بھی می ٹو مہم کا حصہ بنتے ہوئے ان تمام افراد کو تنقید کا نشانہ بناچکی ہیں جو جنسی طور پر ہراساں کرنے والوں کے خلاف آواز نہیں اٹھاتے۔

Eman Suleman wants us to stop calling alleged harassers 'innocent until proven guilty'

(تصویریں انسٹاگرام )

ایسے ہی پرکشش فوٹو گیلری دیکھنے کے لئے یہاں کلک کریں

Read all Latest photogallery news in Urdu at urdutahzeeb.com. Stay updated with us for Daily urdu news from photogallery and more news in Urdu. Like and follow us on Facebook

Title: Eman suleman wants us to stop calling alleged harassers innocent until proven guilty in Urdu | In Category: فوٹو گیلری Photogallery Urdu News
What do you think? Write Your Comment

Leave a Reply

Your email address will not be published.