پاکستان علما کونسل نے مقتول سکھ ممبر اسمبلی کو تمغہ امتیاز سے سرفراز کرنے کا مطالبہ کیا

اسلام آباد: مذہبی رہنماؤں نے خیبر پختون خوا کے ممبر اسمبلی سردار سورن سنگھ کے قتل کی شدت سے مذمت کی اور حکومت سے مطالبہ کیا کہ وہ مقتول سکھ ممبر اسمبلی کو ”تمغہ امتیاز“ سے سرفراز کرے۔ مقتول سردار سورن سنگھ کو خراج عقیدت پیش کرنے کے لیے پاکستان علماءکونسل کے پرچم تلے منعقد تعزیتی جلسہ میں حاضرین سے خطاب کرتے ہوئے مذہبی رہنماو¿ںنے دہشت گردی، انتہا پسندی، مسلکی تشدد اور کرپشن کے خلاف ایک مہم چلانے کا عہد کیا۔علماءکونسل کے چیرمین حافظ محمد طاہر اشرفی نے ملک میں بین مذاہب ہم آہنگی کے قیام اور دہشت گردی کے قلع قمع کے لیے مقتول رکن اسمبلی کی جدو جہد پر روشنی ڈالی۔مسٹر اشرفی نے کہا کہ سردار سورن سنگھ نے پاکستان کی خاطر اپنے کنبہ کی قربانی دے دی ۔انہوں نے بیوی کے ساتھ پاکستان چھوڑنے سے انکار کر دیا ۔ جس پر ان کی بیوی طلاق لے کر ہندوستان منتقل ہو گئیں۔انہوں نے پاکستان تحریک انصاف پر بھی شدید تنقید کی کہ وہ اپنے ممبراسمبلی کے قتل کو سنجیدگی سے نہیں لے رہی۔ عوامی حلقوں میں یہ خیال ظاہر کیا جا رہا ہے جو صد فیصد درست محسوس ہوتا ہے کہ سردار سورن سنگھ کو سیاسی رنجش میں قتل نہیں کیا گیا بلکہ دہشت گردی کے خلاف ان کا نظریہ ان کے قتل کا باعث بنا ہے ۔ اور اس بات کا اغلب گمان ہے کہ انہیں تحریک طالبان پاکستان نے ہلاک کرایا ہے۔

Read all Latest pakistan news in Urdu at urdutahzeeb.com. Stay updated with us for Daily urdu news from pakistan and more news in Urdu. Like and follow us on Facebook

Title: tamgha i imtiaz sought for soran singh in Urdu | In Category: پاکستان  ( pakistan ) Urdu News

Leave a Reply