ٹرمپ کی دھمکی کے جواب میں پاکستان نے امریکہ سے مذاکرات ملتوی کردیے

اسلام آباد: پاکستانی حکومت نے امریکی صدر ڈونالڈ ٹرمپ کے پاکستان مخالف بیان کے خلاف امریکہ کے ساتھ ہونے والے تمام مذاکرات اور دو طرفہ دوروں کو ملتوی کردیا ہے۔ پاکستانی اخبار ڈان نے پاکستان کے وزیر خارجہ خواجہ محمد آصف کے حوالے سے بتایا کہ مسٹر ٹرم کے افغانستان پالیسی کے اعلان کرنے کے دوران پاکستان کی تنقید کے خلاف مریکہ کے ساتھ بات چیت اور دو طرفہ دورے کو ملتوی کردیا گیا ہے۔مسٹر آصف نے سینیٹ کمیٹی کو بتایا کہ مسٹر ٹرمپ کے بیان کو سنجیدگی سے لیتے ہوئے پاکستان نے یہ قدام اٹھایا ہے۔
خیال رہے کہ امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ نے 21 اگست کو افغانستان، پاکستان اور جنوبی ایشیاءکے حوالے سے نئی امریکی پالیسی کا اعلان کرتے ہوئے کہا تھا کہ ’ہم پاکستان کو اربوں ڈالر ادا کرتے ہیں مگر پھر بھی پاکستان نے ان ہی دہشت گردوں کو پناہ دے رکھی ہے جن کے خلاف ہماری جنگ جاری ہے‘۔نئی امریکی پالیسی میں افغانستان میں ہندوستان کو اہم کردار دینے کا اشارہ بھی کیا گیا تھا جو پاکستان کے ان خدشات میں اضافے کا سبب بنا تھا کہ ہندوستان اس موقع کو استعمال کرکے پاکستان کے سرحدی علاقوں میں مسائل پیدا کرے گا۔
اس حکمت عملی میں یہ بھی کہا گیا تھا کہ اگر پاکستان دہشت گردوں کی جانب سے امریکی اور افغان فورسز پر ہونے والے مبینہ سرحد پار حملوں کو نہیں روکتا تو تادیبی کارروائی کی جائے گی۔ قابل ذکر ہے کہ مسٹر ٹرمپ نے ہفتے کے روز اپنے ٹیلی ویڑن خطاب میں پاکستان کو خبردار کیا تھا کہ اگر وہ اپنی حکومت کو دہشت گردی کو محفوظ پناہ گاہ ہونے کی اجازت نہ دے تو اسے سیکورٹی امداد میں کمی کی جاسکتی ہے۔

Read all Latest pakistan news in Urdu at urdutahzeeb.com. Stay updated with us for Daily urdu news from pakistan and more news in Urdu. Like and follow us on Facebook

Title: Talks with united states suspended in protest pakistani foreign minister in Urdu | In Category: پاکستان Pakistan Urdu News

Leave a Reply