سپریم کورٹ نے عمران خان کی لاہور سے جیت کا نوٹی فکیشن روکنے کے لیے لاہور ہائی کورٹ کافیصلہ باطل قرار دے دیا

اسلام آباد: سپریم کورٹ آف پاکستان نے پاکستان تحریک انصاف (پی ٹی آئی) کے سربراہ عمران خان کو این اے131-حلقہ سے فاتح قرار دینے کا نوٹی فکیشن جاری کرنے سے الیکشن کمیشن کو روکنے اور ریٹرننگ افسر کو ووٹوں کی دوبارہ گنتی کرنے کا حکم دینے کے حوالے سے لاہور ہائی کورٹ کے فیصلے کو کالعدم قرار دے دیا۔

لاہور ہائی کورٹ کے فیصلہ کے خلاف عمران خان کی اپیل کی سماعت کرتے ہوئے چیف جسٹس میاں ثاقب نثار نے کہا کہ عدالت عظمیٰ این اے140- کے الیکشن کے حوالے سے ایک عذر داری پر سماعت کرتے ہوئے منگل کے روز بھی اسی قسم کے ایک حکم کو معطل کر چکی ہے۔

واضح ہوکہ لاہور ہائی کورٹ کے جج جسٹس مامون رشید شیخ نے حلقہ این اے131-سے پاکستان مسلم لیگ نواز(پی ایم ایل این)کے رنر اپ امیدوار خواجہ سعد رفیق کی پٹیشن کو داخل کرتے ہوئے ووٹوں کی دوبارہ گنتی کا حکم جاری کیا تھا۔

بدھ کی سماعت کے دوران سعد رفیق کے وکیل نے عدالت کے سامنے دلیل دیکہ 25جولائی کے انتخابات میں عمران خان پانچ حلقوں سے جیتے ہیں۔اور وزیر اعظم منتظر نے اپنے خطاب جیت میں وعدہ کیا تھا کہ جہاں جہاںمبینہ طور پر دھاندلی ہوئی ہے وہاں حلقوں میں دبارہ گنتی کرائی جائے گی۔

لیکن چیف جسٹس نے ان کی دلیل کو یہ کہتے ہوئے خارج کر دای یہ محض سیاسی بیانات ہوتے ہیں۔عدالت نے سعد رفیق کو ہدایت کی کہ وہ متعلقہ الیکشن ٹریبونل میں اپنی درخواست لے کر جائیں اورووٹوں کی دوبارہ گنتی کرائے جانے کا التماس کریں۔

Read all Latest pakistan news in Urdu at urdutahzeeb.com. Stay updated with us for Daily urdu news from pakistan and more news in Urdu. Like and follow us on Facebook

Title: Supreme court sets aside lhc decision to stop notification of imrans victory in lahore in Urdu | In Category: پاکستان Pakistan Urdu News

Leave a Reply