لاہور میں جماعت الدعویٰ نے عدالت شرعیہ قائم کر دی

لاہور: روایتی نظام عدل میں عوام کے بڑھتے عدم اعتماد اور سماج میں مذہبی تنظیموں کے بڑھتے اثر کے پیش نظر جماعت الدعویٰ نے شرعی قوانین کی روشنی میں عوام کو انصاف دلانے کے لیے صوبائی دارالخلافہ لاہور میں دارارالقضا شرعیہ قائم کر دیا ۔
ڈان نیوز سے ایک ماہر قانون نے بات کرتے ہوئے کہا کہ یہ آئین پاکستان کی کھلی خلاف ورزی ہے۔ تاہم جماعت الدعویٰ کا دعویٰ ہے کہ وہ صرف ثالثی کرے گی اور شریعت کی روشنی میں فیصلے کرے گی۔جماعت الدعویٰ کالعدم تنظیم نہیں ہے اور دعویٰ کرتی ہے کہ وہ خاص طور پر ملک کے قدرتی آفات سے متاثرہ شہروں میں خیراتی ادارے، اسپتال اور اسکول چلانے کے علاوہ اور بھی کئی سماجی بہبود کی خدمات انجام دیتی ہے۔
ذرائع نے بتایا کہ جماعت الدعویٰ کی ’ثالثی عدالت شرعیہ‘ نے انصاف کے لیے رجوع کرنے والے شہریوں کی شکایات درج کرنا اور مدعا علیہان کو شخصی طور پر یا کسی وکیل کے توسط سے حاضر ہونے کے لیے سمن جاری کرنا شروع کر دیے ہیں اور انتباہ بھی دیا ہے کہ حاضر نہ ہونے کی صورت میں شرعی قوانین کے تحت سخت کارروائی کی جائے گی۔

Title: sharia court dispenses justice in lahore | In Category: پاکستان  ( pakistan )

Leave a Reply