سعودی فوجی اتحاد میں پاکستان کی شمولیت پروزیر اعظم بذات خود ایوان میں بیان دیں: خورشید شاہ

اسلام آباد:پاکستان پیپلز پارٹی کے رہنماو اپوزیشن لیڈر خورشید شاہ نے قومی اسمبلی کے اجلاس میں پاکستان کا سعودی عسکری اتحاد میں شمولیت پر تنقید کرتے ہوئے کہا ہے کہ نوازشریف کو بذات خود ایوان میں آ کر اس بات کی بریفنگ دینی ہوگی کہ پاکستان سعودی عسکری اتحاد کا حصہ کیسے بنا اور پاکستان اور سعودی عرب کے درمیان کیا طے پایا ہے۔ ان کا کہنا ہے کہ اپوزیشن سعودی عسکری اتحاد میں پاکستان کی شمولیت پر وزیر اعظم کے مشیر خارجہ سرتاج عزیزکی بریفنگ کو مسترد کرتی ہے۔
قائد حزب اختلاف خورشید شاہ کا مزید کہنا ہے کہ وزیر دفاع نے ایوان نے اس بات کی یقین دہانی کروائی تھی کہ سعودی عسکری اتحاد میں شمولیت کی صورت میں وزیراعظم ایوان کو اعتماد میں لیں گے اور سعودی عرب کی سربراہی میں بننے والے اتحاد کی شرائط اور ٹی آر اوز طے ہونے تک جنرل راحیل شریف کو این او سی جاری نہیں کیا جائے گا۔ انہوں نے کہا ہے کہ حکومت نے ایوان اور اپوزیشن کو اب تک دھوکے میں رکھا ہے بتایا جائے کہ کن شرائط و ضوابط کے تحت سابق آرمی چیف سعودی عرب گئے ہیں۔خورشید شاہ کا کہنا ہے کہ سعودی عرب کی سربراہی میں بننے والے عسکری اتحاد کی وجہ سے دہشت گردی میں مزید اضافہ ہوا ہے اور قطر پر پابندیاں بھی اسی اتحاد کا نتیجہ ہے۔

Read all Latest pakistan news in Urdu at urdutahzeeb.com. Stay updated with us for Daily urdu news from pakistan and more news in Urdu. Like and follow us on Facebook

Title: Pm nawaz should brief na on middle east crisis khursheed shah in Urdu | In Category: پاکستان Pakistan Urdu News

Leave a Reply