کرپشن کے تینوں ریفرنسز یکجا کرنے کی نواز شریف کی استدعا احتساب عدالت نے خارج کر دی

اسلام آباد: پاکستانکی انسداد بدعنوانی عدالت نے نااہل قرار دیے گئے وزیر اعظم میاں محمد نواز شریف کی وہ درخواست جس میں انہوں نے قومی احتساب بیورو کے ان کے خلاف کرپشن کے تینوں ریفرنسز کو یکجا کرنے کی استدعا کی گئی تھی اور جس پر منگل کو سماعت مکمل ہونے کے بعد فیصلہ محفوظ کر لیا گیا تھا، بدھ کے روز خار ج کر دی ۔
نوازشریف اپنی صاحبزادی مریم نواز اور داماد ریٹائرڈ کیپٹن محمد صفدر کے ہمراہ قومی احتساب بیورو کی جانب سے دائر ریفرنسز کے سلسلے میں اسلام آباد کی احتساب عدالت میں پیش ہوئے۔ احتساب عدالت کے جج محمد بشیر نے، جوشریف خاندان کے خلاف ماو¿رائے ساحل املاک سے متعلق ریفرنسز کی سماعت کر رہے ہیں، نوازشریف،مریم نواز اور صفدر کیخلاف قومی احتساب بیورو کی جانب سے دائر تین ریفرنسز کو یکجا کرنے کی درخواست مسترد کرتے ہوئے سماعت 15 نومبر تک ملتوی کردی۔
احتساب عدالت کے جج محمد بشیر نے نواز شریف کو پہلی مرتبہ کٹہرے میں بلا کر ان پر فردِ جرم عائد کی۔سابق وزیراعظم کی احتساب عدالت میں پیشی کے موقع پر فیڈرل جوڈیشل کمپلیکس (ایف جے سی) میں اور اس کے اطراف سیکیورٹی کے انتہائی سخت انتظامات کیے گئے تھے۔واضح رہے کہ عدالتی فیصلے میں کہا گیا کہ شریف خاندان کیخلاف تینوں ریفرنسز الگ الگ سنے جائیں گے ۔

Title: pakistan court rejects nawaz sharifs plea to merge 3 graft cases | In Category: پاکستان  ( pakistan )

Leave a Reply