پاکستان نے سفارت کار کو ہندوستان چھوڑنے کا حکم دینے کی مذمت کی

اسلام آباد:پاکستان نے ہندوستان کی جانب سے پاکستانی ہائی کمیشن کے افسر کو ’ناپسندیدہ شخص‘ قرار دینے کے اقدام کی شدید مذمت کرتے ہوئے ہندوستان کی جانب سے افسر پر عائد کیے جانے والے جاسوسی کے الزامات کو مسترد کردیا ہے۔
پاکستانی وزارت خارجہ کے ترجمان نے ہندوستان کی اس کارروائی کو انتہائی منفی قرار دیا اور کہا کہ یہ منصوبہ میڈیا میں پروپیگنڈہ کے لئے تیار کیا گیا ہے۔پاکستانی دفتر خارجہ نے نئی دہلی کی جانب سے پاکستانی ہائی کمیشن کے افسر کو ’ناپسندیدہ شخص‘ قرار دینے کے اقدام کی شدید مذمت کرتے ہوئے ہندوستان کی جانب سے عائد کیے جانے والے الزامات کو مسترد کردیا۔
دفتر خارجہ کی جانب سے جاری بیان میں کہا گیا کہ ہندوستانی حکام نے پاکستانی سفارتکار کو 26 اکتوبر کو جھوٹے اور بے بنیاد الزام پر حراست میں لیا اور ہائی کمشنر کی مداخلت پر تین گھنٹے بعد انہیں رہا کردیا گیا جبکہ انہیں 29 اکتوبر تک ہندوستان سے نکل جانے کی بھی ہدایت کی گئی۔ بیان میں کہا گیا کہ پاکستان اپنے سفارتکار کی گرفتاری اور بدسلوکی کی مذمت کرتے ہیں اور ہندوستان کے الزامات کو مسترد کرتا ہے۔
پاکستانی وزارت خارجہ کا مزید کہنا ہے کہ ہندوستان کی جانب سے اشتعال انگیز اقدامات کے ذریعے کشمیر میں انسانی حقوق کی خلاف ورزیوں سے توجہ ہٹانے کی کوشش کامیاب نہیں ہوگی۔ اور پاکستان عالمی برادری سے مطالبہ کرتا ہے کہ وہ ہندوستانی سازشوں کا نوٹس لے۔

Read all Latest pakistan news in Urdu at urdutahzeeb.com. Stay updated with us for Daily urdu news from pakistan and more news in Urdu. Like and follow us on Facebook

Title: Pakistan condemns expulsion of its diplomate in Urdu | In Category: پاکستان Pakistan Urdu News

Leave a Reply