جنوب ایشیا میں ایٹمی و میزائل پیش رفتوں پر پاکستان و امریکہ کا اظہار تشویش

اسلام آباد: پاکستان اور امریکہ نے جنوب ایشیا میں ایٹمی و میزائل پیش رفتوں پر گہری تشویش کا اظہار کرتے ہوئے خطہ میں دائمی امن کے لیے ہندوستان اور پاکستان کے درمیان معرض التوا میں پڑے تنازعات کے تصفیہ کی ضرورت پر زور دیا۔
پاکستان یو ایس سلامتی دفاعی استحکام اور عدم توسیع ورکنگ گروپ نے آٹھویں دور کے تبادلہ خیال کے بعد ایک مشترکہ بیان میںکہا کہ طرفین نے دفاعی استحکام میں ایک دوسرے کے مفاد کو تسلیم کیا اور جنوب ایشیا میں ایٹمی و میزائل پیش رفتوں پر ایک دوسرے کی تشویش کو سمجھا۔ورکنگ گروپ کے، جو کہ دونوں ملکوں کے اسٹریٹجک ڈائیلاگ کا ایک ذریعہ ہے، اجلاس کی پاکستانی خارجہ سکریٹری اعزاز چودھری اور امریکہ کی نائب وزیر خارجہ برائے اسلحہ کنٹرول اور بین الاقوامی سلامتی روز گوٹ موئلر نے مشترکہ صدارت کی۔
ہندوستان کے ذریعہ برہموز کروز میزائلوں کی جار اقسام کی فوج میں شمولیت،ایٹمی اسلحہ لے جانے کی صلاحیت کی حامل کے4-آبدوز، بالسٹک میزائلوں اور فضا میں ہی تباہ کر دینے کی صلاحیت رکھنے والے سوپر سونک میزائل کے تجربوں سے خطہ میں دفاعی عدم توازن پیدا ہو گیا ہے اور اس سے نظام اس قد ر درہم رہم ہو جائے گا کہ اسلحہ کی دوڑ شروع ہو سکتی ہے۔

Title: nuclear missile developments in s asia worry us pakistan | In Category: پاکستان  ( pakistan )

Leave a Reply