نواز شریف کی سزائے قید معطل کرنے کی عرضی پر سماعت موخر

اسلام آباد: اسلام آباد ہائی کورٹ نے العزیزیہ اسٹیل ملز /ہل میٹلز اسٹبلیش منٹ ریفرنس میں معزول وزیر اعظم میاں محمد نواز شریف کی سزائے قید کو معطل کرنے کی عرضی پر سماعت ملتوی کردی۔احتساب جج محمد ارشد ملک نے 24دسمبر 2018کو العزیزیہ ریفرنس میں نواز شریف کو مجرم قرار دے کر 7سال کی قید اور ڈیڑھ ارب روپے جرمانے کی سزا سنائی تھی۔ ممتاز وکیل خواجہ حارث احمد، بیرسٹر منور دگل، زبیر خالد اور دیگر معروف وکلاءپر مشتمل سابق وزیر اعظم کی قانونی ٹیم نے گذشتہ ہفتہ العزیزیہ ریفرنس میں نواز شریف کی سزا کے خلاف اپیل کرنے کے ساتھ ایک عذر داری بھی داخل کی تھی۔ اسلام آباد ہائیکورٹ کے چیف جسٹس اطہر من اللہ کی زیر سربراہی ایک دو ججی بنچ نے معاملہ غیرمعینہ مدت کے لیے موخر کر دیا تھا کیونکہ اپیل پر سماعت نہ ہونے تک عذر داری کی سماعت نہٰں کی جاسکتی۔اس عرضی پر سماعت اپیل کی سماعت کی تاریخ طے ہوجانے کے بعد ہی ہو گی۔خواجہ حارث نے دلیل پیش کی کہ عدالت اس کیس کی سماعت کر لے کیونکہ اپیل پر سماعت عدالت کی تعطیلات ، جو منگل کو ختم ہورہی ہیں،کے بعد ہی ہوگی۔

Read all Latest pakistan news in Urdu at urdutahzeeb.com. Stay updated with us for Daily urdu news from pakistan and more news in Urdu. Like and follow us on Facebook

Title: Nawazs petition seeking suspension of jail sentence in al azizia case shelved in Urdu | In Category: پاکستان Pakistan Urdu News
What do you think? Write Your Comment