نواز شریف کا احتساب عدالت میں بیان قلمبند، ایوان فیلڈ کی جائیدادوں کی ملکیت سے انکار

اسلام آباد: نا اہل قرار دیے گئے وزیر اعظم میاں محمد نواز شریف نے اسلام آباد احتساب عدالت میں ایوان فیلڈ ریفرنس میں بیان قلمبند کراتے ہوئے جائیدادوں کی ملکیت کی تردید کی اور عدالت کو بتایا کہ جائیداد کی خریداری کے لیے کسی قسم کے بھی لین دین سے وہ واقف نہیں ہیں۔

عدالت نے نواز شریف، ان کی بیٹی مریم نواز اور داماد کیپٹن صفدر کو مجموعہ ضابطہ فوجداری کی دفعہ342کے تحت اپنے دفاع میں حتمی بیانات دینے اور مقدمہ میں پیش19گواہوں کے بیانات کے برعکس کوئی بات پیش کرنے کے لیے موقع دیا تھا۔

نواز کا بیان انہیں دیے گئے 128سولات پر مشتمل اس سوالنامہ کا جواب تھا جو 16مئی کو عدالت نے نواز اور کنبہ کے وکیل کو دیا تھا۔سوالنامہ کے مطابق عدالت نے نواز سے معلوم کیا تھا کہ کیا وہ نیسکول اور نئیلسن کے بے نامی مالک ہیں۔

یہ وہ دو آف شور کمپنیاں ہیں جنہیں ایوان فیلڈ فلیٹس کا مالک دکھایا گیا ہے۔لندن جائیدادوں ادائیگی کے حوالے سے نواز شریف نے کہا کہ طارق شفیع کے حلف نامہ میں بیان کر دہ کسی بھی لین دین کا انہیں علم ہے اور نہ ہی وہ کسی لین دین میں شامل رہے ہیں۔

طارق شفیع نے ، جو نواز شریف کے رشتہ دار ہیں ،اپنے حلف نامہ میں کہا تھا کہ 1980میں گلف اسٹیل ملز کی فروخت کے بعد انہوں نے قطر کی حکمراں خاندان کے کھاتے میں12ملین درہم جمع کرائے تھے۔

Read all Latest pakistan news in Urdu at urdutahzeeb.com. Stay updated with us for Daily urdu news from pakistan and more news in Urdu. Like and follow us on Facebook

Title: Nawaz denies ownership of avenfield flats while recording statement at accountability court in Urdu | In Category: پاکستان Pakistan Urdu News

Leave a Reply