نواز شریف چودھری شوگر ملز کیس میں14روز کے جسمانی ریمانڈ پر قومی احتساب بیورو کے حوالے

لاہور: یہاں کی ایک احتساب عدالت نے سابق وزیر اعظم اور پاکستان مسلم لیگ نواز(پی ایم ایل این) کے قائد میاں محمد نواز شریف کوچودھری شوگر ملز کیس میں 14روز کے جسمانی ریمانڈ پر قومی احتساب بیورو کے حوالے کر دیا ۔

احتساب عدالت نے نواز شریف کو جسمانی ریمانڈ پر دیتے ہوئے احتساب بیورو کو حکم دیا کہ وہ نواز شریف کو25اکتوبر کو عدالت میں پیش کرے۔قبل ازیں بیورو نے آج لاہور کی کوٹ لکھپت جیل سے، جہاں وہ العزیزیہ کیس میں سات سال کی قید کاٹ رہے ہیں، گرفتار کر کے عدالت میں پیش کیا۔

عدالتی کارروائی شروع ہوتے ہی جج چودھری امیر محمد خان نے پوچھا کہ نواز کہاں ہیں جس کے بعد نواز شریف کٹہرے میں نمودار ہوگئے۔کارروائی کے دوران ،جس میں سابق وزیر اعظم کے ساتھ سیلفی لینے کے شوق میں پارٹی کارکنان بار بار رخنہ ڈالتے رہے، بیورو کے پرازیکیوٹر حافظ اسداللہ اعوان نے نواز شریف کو جسمانی ریمانڈ پر دینے کی درخواست کی۔

احتساب بیورو نے عدالت کو بتایا کہ ملزم چودھری شوگر ملزمیں حصص کی خریداری میں منی لانڈرنگ کا مرتکب ہوا ہے۔اور2016میں ملزم چودھری شوگر ملز میں سب سے بڑا شراکت دار ہو گیا تھا اور ملزم نے چودھری شوگر ملز اوور شمیم شوگر ملز دونوں میں اپنی حصص داری برقرار رکھی۔

پرازیکیوٹر نے مزید کہا کہ چودھری شوگر ملز کیس میں ہی نواز شریف کی بیٹی مریم نواز اور خاندان کے کئی دیگر اراکین چودھری شوگر ملز میں شراکت دار ہیں۔ مریم نواز بھی اسی مقدمہ میں اسی جیل میں جوڈیشیل ریمانڈ پر ہیں۔ ان پر الزام ہے کہ وہ12ملین حصص کی خریداری کے بعد 2008میں ملز کی سب سے بڑیی شئیر ہولڈر ہو گئی تھیں۔ نواز شریف کے بھتیجے یوسف عباس بھی اسی کیس میں کیمپ جیل میں جوڈیشیل ریمانڈ پر ہیں۔

یہاں یہ بات قابل ذکر ہے کہ احتساب بیورو کے پرازیکیوٹر جمعرات کو پہلے ہی کہہ چکے تھے کہ نواز شریف کو چودھری شوگر ملز کیس میں جمعہ کو گرفتار کر لیا جائے گا اور اسی روز عدالت میں پیش کر کے انہیں 15روزکے جسمانی ریمانڈ پر بیورو کے حوالے کردیے جانے کی استدعا کی جائے گی ۔2017میں پنامہ دستاویزات کے فیصلہ کی روشنی میں اقتدار سے معزولی سے شروع ہونے والے کرپشن کے دو معاملات العزیزیہ اور ایون فیلڈ میں سزا سنائے جانے کے بعد یہ چودھری شوگر ملز معاملہ تازہ ترین ہے۔

نواز شریف کی حمایت میں پارٹی کی ترجمان مریم اورنگ زیب،پی ایم ایل این سنیٹر آصف کرمانی، نواز شریف کے دامادریٹائرڈ کیپٹن محمد صفدر، پرویز رشید اور امیر مقام سمیت متعدد پارٹی کارکنان عدالت کے باہر جمع تھے جو عدالتی کاررواائی شروع ہونے سے پہلے ہی کمرہ عدالت میں داخل ہو چکے تھے۔نواز شریف کے وکیل امجد پرویز نے اس امر کی تردید کی کہ ان کے موکل کے چودھری شوگر ملز میں حصص ہیں۔

انہوں نے کہا کہ یہ کوئی پہلا موقع نہیں ہے اس سے قبل بھی حریف پارٹی کی حکومت ان کے اثاثوں کی تحقیقات کرا چکی ہے نیز کمپنیوں کے قیام کی بھی تفتیش کرا چکی ہے لیکن کچھ نہیں ملا۔ انہوں نے مزید کہا کہ نواز شریف کا چودھری شوگر ملز میں کوئی رول نہیں ہے۔ لیکن عدالت نے کوئی دلیل تسلیم نہیں کی اور نواز شریف کو 14روز کے جسمانی ریمانڈ پر بیورو کے حوالے کر دیا۔

Read all Latest pakistan news in Urdu at urdutahzeeb.com. Stay updated with us for Daily urdu news from pakistan and more news in Urdu. Like and follow us on Facebook

Title: Nab granted 14 day physical remand of nawaz sharif in chaudhry sugar mills case in Urdu | In Category: پاکستان Pakistan Urdu News
What do you think? Write Your Comment

Leave a Reply

Your email address will not be published.