پاکستان بھر میں”مارشل لگاؤ اور فوجی حکومت تشکیل دو“ بینرز آویزاں

اسلام آباد: پنجاب میں”موو آن پاکستان “نامی ایک غیر معروف سیاسی پارٹی نے پیر کے روز ملک گیر سطح پر اب ایسے بینرز آویزاں کر دیے جن میں اس کے لیڈروں نے اس بار فوجی سربراہ جنرل راحیل سے نومبر میں طے تاریخ کے مطابق ریٹائرمنٹ لینے کے اپنے فیصلہ پر نظر ثانی کرنے کی درخواست کرنے کے بجائے ان کو تلقین کی ہے کہ وہ ملک میں مارشل لا نافذ کر کے فوجی حکومت قائم کریں اور خود اس کی سرپرستی کریں۔
ایک بینر کراچی میں وزیر اعلیٰ ہاؤس اور رینجرز ہیڈ کوارٹرز کے درمیان آویزاں کیا گیا ہے جس میں لکھا ہے ”جانے کی باتیں ہوئیں پرانی، خدا کے لیے اب آجاؤ“۔پارٹی کے منتظم اعلیٰ علی ہاشمی نے ڈان نیوز کو بتایا کہ ان کی پارٹی کا مقصد فوجی سربراہ کو اس بات پر قائل کرنا ہے کہ ملک کے حالات کے مد نظر ملک میں مارشل لا نافذ کر کے ایک فوجی حکومت قائم کی جائے ۔
اور جنرل راحیل شریف خود اس کی سرپرستی فرمائیں۔فوج کے شعبہ رابطہ عامہ ’انٹر سروس پبلک ریلیشنز‘ ان بینروں کے حوالے سے مہر بلب ہے لیکن تجزیہ کار عامر رانا کا خیال ہے کہ یہ تازہ ترین واقعہ اس نظریہ کو تقویت پہنچاتا ہے کہ کچھ تو کھچڑی پک رہی ہے۔
دلچسپ بات یہ ہے کہ یہ بینرز راتوں رات بیک وقت تمام اہم راستوں ،ناکوں اور شاہراہوں پر جابجا آویزاں ہو گئے۔یہاں تک کہ کئی فوجی چوکیوں اور اضافہ حفاظتی بندوبست والے چھاؤنی علاقوں میں بھی لگے نظر آرہے ہیں۔
مسٹر ہاشمی نے دعویٰ کیا کہ لاہور اور فیصل آباد میں صبح ہوتے ہی ان کی پارٹی کے لگائے گئے یہ بینرز ہٹا دیے گئے۔

Read all Latest pakistan news in Urdu at urdutahzeeb.com. Stay updated with us for Daily urdu news from pakistan and more news in Urdu. Like and follow us on Facebook

Title: Mysterious banners urging coas to take over put up across country in Urdu | In Category: پاکستان Pakistan Urdu News

Leave a Reply