قتل اور ریپ کے مجرم کو حیدرآباد سندھ کی سینٹرل جیل میںپھانسی دے دی گئی

حیدرآباد:حیدرآباد کی سنٹرل جیل میں قتل اور ریپ کے جرم میں سزائے موت کے مستحق قرار دیے جانے کے بعد سے ہیپھانسی چڑھائے جانے کے منتظر قیدی سکندر علی جویو کو مجسٹریٹ اظہر شامیل اور جیل کے سربراہ ضیاء الرحمٰن کی موجودگی میں منگل کو علی الصباح پھانسی دے دی گئی۔ بعدازاں ضیاءالرحمٰن نے مجرم کی موت کی تصدیق کر دی۔
واضح رہے کہ سکندر جویو نے 16 سال قبل جوہی دادو میں اپنی ایک نابالغ رشتہ دار لڑکی کو ریپ کے بعد قتل کیا تھا اور اس کے قریبی عزیز نے ہی اس کے خلاف جوہی دادو پولیس اسٹیشن میں قتل اور ریپ کا مقدمہ درج کرایا تھا جب کہ عدالت نے جرم ثابت ہونے پر ملزم کو سزائے موت کی سزا سنائی تھی۔
پروانہ موت جاری کیے جانے سے قبل سکندر علی جویو نے سزائے موت کے خلاف سندھ ہائی کورٹ اور بعد ازاں سپریم کورٹ سے رجوع کیا تاہم دونوں عدالتوں نے فیصلے کو برقرار رکھا۔ اس کے علاوہ صدر مملکت ممنون حسین نے بھی مجرم کی رحم کی اپیل مسترد کردی تھی۔ مجرم کے تمام اہل خانہ نے پیر کے روز سینٹرل جیل پہنچ کر مجرم سے آخری ملاقات کی۔دوسری جانب اس دوران سکندر جویو کے اہل خانہ نے متقول لڑکی کے والدین سے متعدد مرتبہ معاف کردینے کے لیے رابطہ کیا تاہم مقتولہ کی والدہ نے انکار کردیا
۔واضح رہے کہ سینٹرل جیل حیدر آباد میں 28 مئی سال2015 ک کے بعد یہ پہلی پھانسی دی گئی ہے۔ 1998میں طیارہ اغوا کیس کے 2مجرموں شہسوار بلوچ اور صابر بلوچ میں سے ایک کو کراچی میں اور ایک کو حیدرآباد کی اسی جیل میں پھانسی دی گئی تھی۔

Read all Latest pakistan news in Urdu at urdutahzeeb.com. Stay updated with us for Daily urdu news from pakistan and more news in Urdu. Like and follow us on Facebook

Title: Murder rape convict executed in hyderabad in Urdu | In Category: پاکستان Pakistan Urdu News

Leave a Reply