پرویز مشرف کو معاف کرنے کا فیصلہ خلاف شریعت: شہداءفاؤنڈیشن

Maulana-Aziz

اسلام آباد:لال مسجد شہداءفاؤنڈیشن نے سابق صدر پرویز مشرف کے خلاف مقدمہ قتل واپس لینے کا مولانا عبد العزیز کے فیصلے کو خلاف شرع بتایا۔ شہداءفاؤنڈیشن کا پیر کے روزلال مسجد میں ایک اجلاس ہوا جس میں اعلان کیا گیا کہ مولانا عبد العزیز نے ایک فوجی ڈکٹیٹر کے ظلم کی پردہ پوشی کے لیے اپنے کنبہ پر ’امامی مطلق العنانیت ‘ تھوپی ہے۔اس اجلاس کے بعد اسی مقام پر ،جہاں ایک روز قبل مولانا عبد العزیز نے میڈیا کے نمائندوں سے بات کی تھی اور مسجد اور اس سے ملحق مدرسہ جامعہ حفصہ پر فوجی چڑھائی کے ذمہ دار ہر شخص بشمول پرویز مشرف معاف کر نے کا اعلان کیاتھا،شہداءفاو¿نڈیشن نے ایک پریس کانفرنس کی۔شہداءفاو¿نڈیشن کے صدر طارق اسد نے کہا کہ مولانا ملک میں نفاذ شریعت کی باتیں کرتے ہیں لیکن خود ان کا عمل اسلامی اصولوں کے منافی ہے۔ چونکہ یہ فیصلہ خلاف شریعت ہے ا اس لیے ہم چاہتے ہیں کہ مولانا عبد العزیز اسے واپس لے لیں۔انہوں نے کہا کہ شہداءفاو¿نڈیشن کسی کے آگے جھکا اور نہ ہی سابق فوجی تانا شاہ سمیت کسی کے دباو¿ یا پیشکش کی لالچ میں آیا۔جبکہ سابق جنرل خود چاہ رہے تھے شہداءفاو¿نڈیشن مولانا عبد الرشید غازی قتل مقدمہ واپس لے لے ۔لیکن ہم نے ان کی ا ستدعا مستر دکر دی۔

Read all Latest pakistan news in Urdu at urdutahzeeb.com. Stay updated with us for Daily urdu news from pakistan and more news in Urdu. Like and follow us on Facebook

Title: Maulana azizs pardon to musharraf termed against sharia in Urdu | In Category: پاکستان Pakistan Urdu News

Leave a Reply