موبائل چارجر پر کھینچا تانی میں طیش میں آکر چھوٹے بھائی پر تیزاب پھینک دیا

فیصل آباد: پیر کے روز یہاں اس وقت ایک اندوہناک سانحہ پیش آیا جب ایک معمولی سی تکرار میں بڑابھائی اس قدر طیش مین آگیا کہ اس نے آؤ دیکھا نہ تاؤ اور چھوٹے بھائی پر تیزاب سے حملہ کر دیا۔
یہ واقعہ 541جی بی چکیان کا ہے جہاں دو بھائیوں میں موابئیل چارجر کے پہلے استعمال کرنے کی بحث ہو گئی۔ سی سی پی او افضال احمد کے مطابق ابتدائی تحقیقات سے علم ہوا ہے کہ گھر میں موجود واحد چارجر کے پہلے استعمال کرنے پر بات اتنی بڑھ گئی کہ 27سالہ اشرف حسین نے اپنے چھوٹے بھائی شرافت حسین کے منھ پر تیزاب پھینک دیا۔
شرافت کو فوراً ہاسپٹل لے جایا گیا جہاں ڈاکٹروں نے شرافت کی ایک آنکھ کی روشنی ختم ہو جانے کا خدشہ ظاہر کیا ہے۔افضال کے مطابق اشرف جائے واردات سدے فرار ہو گیا ہے اس لیے ابھی تک کوئی گرفتاری عمل میںنہیں آسکی۔
واضح رہے کہ پاکستان میں ہر سال تیزاب کے حملے کے 150تا400کیس منظر عام پر آتے ہیں۔جن میں سے 80فیصد خواتین اور ان میں بھی70فیصد 18سال سے کم عمر کی دوشیزائیں ہوتی ہیں۔اس قسم کے حملوں کا مقصد جان سے مارنا نہیں بلکہ چہرہ مسخ کردینا ہوتا ہے۔

Read all Latest pakistan news in Urdu at urdutahzeeb.com. Stay updated with us for Daily urdu news from pakistan and more news in Urdu. Like and follow us on Facebook

Title: Man throws acid on younger brother in dispute over cellphone charger in Urdu | In Category: پاکستان Pakistan Urdu News

Leave a Reply