پیمرانواز شریف اور لیگی لیڈروںکی عدلیہ مخالف تقاریر نشر کرنا بند کرے:لاہور ہائی کورٹ کا حکم

لاہور:لاہور ہائی کورٹ نے پاکستان الیکٹرانک میڈیا ریگولیٹری اتھارٹی (پیمرا) کو جمعرات کے روز حکم دیا کہ سابق وزیر اعظم میاں محمد نواز شریف اور پاکستان مسلم لیگ نواز کے پارلیمانی اراکین کی عدلیہ مخالف تقاریرنشر یا ٹیلی کاسٹ کرنے پر پابندی عائد کر دے اظہر صدیق کی درخواست پر فیصلہ دیتے ہوئے لاہور ہائی کورٹ نے پیمرا کو حکم نامہ جاری کیا ہے کہ عدلیہ مخالف تقاریر نشر نہ کی جائیں اور بالخصوص نواز شریف ، خاقان عباسی، خواجہ سعد رفیق سمیت سولہ لیگی رہنماوں کی تقاریر نشر کرنے پر پابندی ہے۔ عدالت عالیہ نے ان تمام لیگی رہنماؤں کے ناموں کا ذکر کیا جن پر پابندی عائد کی گئی ہے۔
عدالت نے پیمرا کو حکم دیا ہے کہ اس فیصلے پر فوری عملدرا آمد کو یقینی بنایا جائے۔ لاہور ہائی کورٹ نے کیس کی سماعت کے بعد اپنے فیصلے میں عدلیہ مخالف تقاریر کو نشر کرنے پر پابندی عائد کرتے ہوئے ہدایت کی ہے کہ فیصلے کی کاپی فوری طور پر سپیشل میسنجر کے ذریعے پیمرا کو ارسال کی جائے۔ عدالت عالیہ کے جج جسٹس رشید شیخ نے امان ویلفئیر فاؤنڈیشن کی صدر امینہ ملک کی پٹیشن پر پیمرا سے 12 ستمبر تک جواب طلب کر لیا ہے۔
واضح رہے کہ نواز شریف نے نا اہلی کے بعد جی ٹی روڈ پر ریلی کے دوران عدلیہ پر کڑی تنقید کی تھی۔ انہوں نے اپنی تقاریر میں بار بار یہ جملہ دہرایا تھا کہ عوام نے کروڑوں ووٹ دے کر مجھے منتخب کیا لیکن چند ایک ججز نے عوامی ووٹوں کو نظر انداز کرتے ہوئے مجھے گھر بھیج دیا۔سماعت کے دوران ملک کے وکیل اظہر صدیق نے دلیل دی کہ سابق وزیر اعظم نواز شریف سمیت لیگی وزرا اور رہنما عوام کو عدلیہ کے خلاف اکسا رہے ہیں ، جس سے فساد کا خدشہ ہے نیز یہ عدالت کی توہین بھی ہے لہذا ان کی تقاریر نشر کیے جانے پر پابندی عائد کی جائے۔

Read all Latest pakistan news in Urdu at urdutahzeeb.com. Stay updated with us for Daily urdu news from pakistan and more news in Urdu. Like and follow us on Facebook

Title: Lhc tells pemra to provisionally stop airing anti judiciary speeches by pml n leaders in Urdu | In Category: پاکستان Pakistan Urdu News
Tags:

Leave a Reply