مولانا سراج نے پارلیمنٹ مین حلف نہ لینے کی مولانا فضل ارحمٰن کی تجویز مسترد کر دی

اسلام آباد: متحدہ مجلس عمل (ایم ایم اے) کے نائب صدر مولانا سراج الحق نے پارلیمنٹ میں حلف لینے کا بائیکاٹ کرنے کی ایم ایم اے کے صدر مولانا فضل الرحمٰن کی تجویز مسترد کر دی۔

قدامت پسند، مذہبی، اور انتہائی دائیں بازو کیپاکستانی جماعتوں پر مشتمل سیاسی اتحاد ایم ایم اے نے انتخابی نتائج کے خلاف احتجاج کیا ہے اور اسے دھاندلی سے برآمد کیے نتائج سے تعبیر کیا ہے۔

اس اتحاد میں جماعت اسلامی، فضل الرحمٰن کی جمیعت علمائے پاکستان فضل اور کچھ دیگر پارٹیاں ہیں۔منصورہ میں جماعت اسلامی کے مرکزی دفتر میں ایک پریس کانفرنس کرتے ہوئے سراج الحق نے کہا کہ وہ ٹکراؤ اور دشمنی کا راستہ اختیار کرنے کے حق میں نہیں ہیں ۔ ہم شان اور وقار کے ساتھ حزب اختلاف میں بیٹھیں گے اور اپنا کردار ادا کریں گے۔

مولانا سراج نے مزید کہا کہ ان کی پارٹی نہایت سخت تحفظات کے باوجود ان کی پارٹی نئی حکومت کو خود کو ثابت کرنے کا موقع دینا چاہتی ہے۔انہون نے مزید کہا کہ ایم ایم اے پارلیمنٹ کے اندر اور باہر سے جمہوریت کو مستحکم کرنے کے لیے اپنا کردار ادا کرے گی۔

Read all Latest pakistan news in Urdu at urdutahzeeb.com. Stay updated with us for Daily urdu news from pakistan and more news in Urdu. Like and follow us on Facebook

Title: Ji chief rejects rehmans suggestion against taking oath in parliament in Urdu | In Category: پاکستان Pakistan Urdu News

Leave a Reply