جماعت الاحرار نے لاہور پارک خود کش حملہ کی ذمہ داری قبول کر لی

لاہور: طالبان کے ایک منحرف گروپ جماعت الاحرارنے لاہور پارک خود کش حملہ کی ذمہ داری لیتے ہوئے کہا ہے کہ اتوار کو لاہور پارک میں عیسائیوں کو نشانہ بنا کر یہ واردات ،جس میں بچوں سمیت 70افراد ہلاک ہوگئے، اس کے خود کش دستہ کے فدائین نے انجام دی ہے۔
جماعت الاحرار کے ایک ترجمان احسان اللہ احسان نے کہا کہ ایسٹر منانے والے عیسائیوں کو نشانہ بنا کر اس ہلاکت خیز حملہ سے وزیر اعظم نواز شریف کو یہ پیغام پہنچانا مقصود تھا کہ جماعت الحرار کے فدائین لاہور میں بھی داخل ہو چکے ہیں اور اب مزید ایسے حملے کیے جائیں گے۔ واضح رہے کہ لاہور وزیر اعظم کی سیاسی طاقت کی بنیاد ہے جہاں نسبتاً کم دہشت گردانہ حملے ہوئے ہیں۔ جماعت الاحرار تحریک طالبان سے الگ ہونے والا ایک وہ گروہ ہے جس نے حالیہ مہینوں میں پاکستانی سیکورٹی فورسزا ور غیر فوجیوں پر متعدد حملے کیے ہیں۔
اس خود کش حملہ میں 300سے زائد افراد زخمی بھی ہوئے ہیں۔موصول اطلاع کے مطابق جائے واردات نہایت ہی دلخراش منظر پیش کر رہی تھی۔ تڑپتے بلکتے ماںباپ خون میں لت پت پڑے لوگوں اور ادھر ادھر بکھرے پڑے انسانی اعضا ءکے ڈھیر میں اپنے بچوں کو تلاش کرتے پھر رہے تھے۔اتوار کی شام میں ہونے والی اس واردات کے بعد شہر کے تمام بڑے اسپتالوں میں ہنگامی حالات کا اعلان کر دیا گیا۔
میاں محمد نواز شریف اور صدر پاکستان ممنون حسین نے حسب معمول اس ہولناک واردات میں بے قصوروں کی ہلاکتوں پر افسوس اور صدمہ کا اظہار کیا اور اس واردات کو بزدلانہ حرکت بتایا۔

Read all Latest pakistan news in Urdu at urdutahzeeb.com. Stay updated with us for Daily urdu news from pakistan and more news in Urdu. Like and follow us on Facebook

Title: Jamaat ul ahrar claims lahore park attack in Urdu | In Category: پاکستان Pakistan Urdu News

Leave a Reply