عمران خان کا وزیر اعظم بننا طے،پی ایم ایل این اور پی پی پی کا صفایہ

اسلام آباد:اگر1992میں جاوید میاں داد، انضمام الحق، وسیم اکرم اور وقار یونس جیسے معروف کرکٹ کھلاڑیوں پر مشتمل فوج کے تعاون سے بیسویں صدی کے اواخر میں عمران خان نے پہلی بار ورلڈ کپ جیت کرچار سال کے لیے کرکٹ کی سلطنت کا پاکستان کو حکمراں بنایا تو 21ویں صدی کے اوائل میں انہی کی قیادت میں ان کی سیاسی پارٹی پاکستان تحریک انصاف (پی ٹی آئی) نے ملک کی فوج کی حمایت سے پارلیمانی انتخابات میں سیٹوں کی سنچری لگا کرقومی اسمبلی جیت کر خود کو آئندہ پانچ سال تک کے لیے (بشرطیکہ فوج کی پشت پناہی حاصل رہی)پاکستان کا عملاً حکمراں بنا لیا۔

عمران خان کی پاکستان تحریک انصاف نے حیرت انگیز طور پر ابتدائی رجحانات میں ہی سنچری مکمل کر لینے اور پھر نتائج کے بعد 120سیٹیں جیت لیں۔

اور اس کے ساتھ ہی اب ان کے ایوان اقتدار میں شاہانہ انداز سے داخل ہونے کی راہ ہموار حتمی طور پر ہموار ہو گئی کیونکہ 137 سادہ اکثریت حاصل کرنے کے لیے انہیں آزاد امیدواروں کی حمایت حاصل ہوجائے گی۔

جبکہ پاکستان مسلم لیگ نواز (پی ایم ایل این)دوسرے اور پاکستان پیپلز پارٹی (پی پی پی ) تیسرے نمبر پر ہیں اور ان دونوں کی سیٹوں می مجموعی تعداد بھی پی ٹی آئی کی تعداد کے برابر نہیں ہے کہ بعد از انتخابات اتحاد کر کے مخلوط حکومت سازی کی دعویداری کر سکیں۔

مزید بر آںپی ٹی آئی نے جہاں ایک طرف خیبر پختون خوا میں اپنا اقتدار محفوظ رکھا وہیں پنجاب میں اس نے کانٹے کے مقابلہ کے بعد انیس بیس کے فرق سے حکمراں جماعت پی ایم ایل این کو اپنے رحم و کرم پر ڈال دیا ۔

کیونکہ وہ سب سے بڑی واحد پارٹی بن کر ابھرتی بھی ہے تب بھی سادہ اکثریت سے کوسوں دور رہے گی ایسی صورت میں عمران خان کو ہی فراخ دلی کا مظاہرہ (بشرطیکہ فوج کی رضا شامل ہو) کر کے میں محمد شہبازشریف کولکھنوی انداز میں پہلے آپ کہہ کر حکومت سازی کا دعویٰ کرنے کی پیش کش کرنی چاہیے۔

Read all Latest pakistan news in Urdu at urdutahzeeb.com. Stay updated with us for Daily urdu news from pakistan and more news in Urdu. Like and follow us on Facebook

Title: Imran khan surges ahead in Urdu | In Category: پاکستان Pakistan Urdu News

Leave a Reply