عمران خان نااہلی سے بچ گئے،جہانگیر ترین کو سپریم کورٹ نے نااہل قرار دیا

اسلام آباد: پاکستانی سپریم کورٹ نے سمندر پار کمپنیوں میں حصص اور غیر ملکی فنڈنگ معاملہ میں پاکستان مسلم لیگ نواز کی پٹیشن پرپاکستان تحریک انصاف (پی ٹی آئی )کے سکریٹری جنرل جہانگیر ترین کو نااہل قرار دے دیا جبکہ پارٹی چیرمین عمران خا ن کے حق میں تاریخی فیصلہ سناتے ہوئے انہیں اہل قرار دیا۔
تیہن ججی بنچ نے 14نومبر کو ان دونوں پی ٹی آئی لیڈروں کے خلاف نااہلی کیس میں فیصلہ محفوظ کر لیا تھا۔چیف جسٹس میاں ثاقب نثار نے250صفحات پر مشتمل فیصلہ سناتے ہوئے کہاکہ تمام شواہد کا نہایت گہرائی و گیرائی سے مطالعہ کرنے کے بعد عدالت اس نتیجہ پر پہنچی کہ عمران خان پارلیمنٹ کے رکنیت کے نااہل نہیں قرار دیے جارہے کیونکہ غیر ملکی فنڈنگ کیس میں براہ راست اثر انداز نہیں ہوئے ہیں۔
فیصلہ میں کہا گیا کہ عمران خان اپنی غیر ملکی کمپنی ظاہر کرنے کے پابند نہیں تھے انہوں نے اپنا لندن فلیٹ ایمنسٹی اسکیم میں ڈکلیئر کر دیا اور بنی گالا املاک کو خریدنے کے لیے ان کی اہلیہ جمیمانے انہیں پیسے دیے تھے۔
دوسری جانب فیصلہ میں جہانگیر ترین کے حوالے سے کہا گیا ہے کہ اندرون ملک تجارت کرنے کے جرم کا انہوں نے اقرار کیا ۔لیکن ترین نے دیانتداری سے کام نہیں لیا اور کئی سوالات کے تسلی بخش جواب نہ دے سکے اور ان کے جوابات نے شبہہ میں ڈال دیا۔ لہٰذا آئین کی دفعہ62(1)کے تحت انہیںنااہل قرار دیاجاتا ہے۔

Title: imran khan cleared jahangir tareen disqualified by supreme court | In Category: پاکستان  ( pakistan )

Leave a Reply