یقین نہیں آرہا کہ پاکستان واپس آگئی ہوں: ملالہ یوسف زئی

اسلام آباد: طالبان کے حملے میں شدید زخمی ہو کر بغرض علاج یوکے لے جائے جانے کے بعد وہیں قیام پذیر ہوجانے والی نوبل انعام یافتہ ملالہ یوسف زئی نے 6سال بعد جمعرت کو پاکستان واپس آنے کے بعد کہا کہ اسے ابھی تک یقین نہیں آرہا کہ وہ پاکستان واپس آگئی ہے۔
وزیر اعظم شاہد خاقان عباسی سے انکی رہائش گاہ پر ملاقات کرنے کے بعد باہر ایک مجمع سے خطاب کرتے ہوئے ملالہ نے اپنے آبائی وطن واپس آنے کے حوالے سے گذشتہ پانچ سال کے دوران وہ جو کچھ سوچتی رہی اسے لوگوں کے گوش گذار کیا ۔
سب سے کم عمر نوبل انعام یافتہ اور تعلیم نسواں و بالغان عام کرنے کی جدوجہد میں مصروف ملالہ نے امڈ امڈ کر آنے والے اپنے آنسوؤں پر قابو پانے کی کوشش کرتے ہوئے رقت آمیز لہجہ میں کہا کہ گذشتہ پانچ سال کے دوران وہ صرف یہی خواب دیکھتی رہی کہ وہ اپنے ملک میں قدم رکھ رہی ہے۔
اس نے کہا کہ وہ اپنے ملک کے بچے بچیوں کو خوب تعلیم یافتہ دیکھنے کی خواہشمند ہے اس لیے سب سے التجا کرتی ہوں کہ اپنے بچوں کی تعلیم میں سرمایہ کاری کریں۔
انہوںنے کہا کہ ملالہ فنڈ نے پاکستان میں لرکوین کی تعلیم ے لیے 6ملین ڈالر کی سرمایہ کاری کی ہے۔ملالہ نے کہا کہ یہ آنے والی نسل پاکستان کا مستقبل ہے۔ملالہ نے مزید کہا کہ آج وقت کا تقاضہ ہے کہ تمام سیاسی پارٹیاں متحد ہو جائیں ۔او ر جب معاملہ تعلیم ، صحت اور اقتصادیات کا آجائے تو کوئی سیاست نہیںہونی چاہیے۔

Title: i am very happy to be back home says an emotional malala | In Category: پاکستان  ( pakistan )

Leave a Reply