ٹرمپ کا یروشلم فیصلہ ان کی بد عہدی کا زندہ ثبوت: چیرمین ہندو کونسل

اسلام آباد: ہندو کونسل کے چیئرمین ڈاکٹر رمیش کمار نے کہا ہے کہ یروشلم کو اسرائیل کا دارالخلافہ تسلیم کرنے کے حوالے سے امریکی صدر ڈونلڈ ٹرمپ کا فیصلہ ان کی بد عہدی کا زندہ جاوید ثبوت دنیا کے امن کو تباہ کرنے کے منصوبہ کا جزوہے۔ ڈاکٹر رمیش کے مطابق یروشلم ایمبیسی ایکٹ کے تحت وہاں ہر مذہب کے حقوق کی حفاظت کرنے کی ضمانت دی گئی ہے۔
انہوں نے کہا: بین الاقوامی قوانین کے تحت یروشلم میں مسجد اقصیٰ کے اندر مسلمانوں کو عبادت کرنے کی اجازت ہے۔ کوئی انہیں وہاں عبادت کرنے سے نہیں روک سکتا۔
ہندو کونسل کے چیئرمین نے کہا کہ امریکی صدر کے بیان کے بعد وہاں مسلمانوں پر ڈھائے جانے والے مظالم قابل مذمت ہیں۔ ڈاکٹر رمیش کمار نے کہا کہ ہمارا مطالبہ ہے کہ ویٹی کن سٹی کی طرز پر بیت المقدس کو آزاد شہر قرار دیا جائے یا دونوں ممالک کی باہمی رضا مندی سے دونوں حکومتیں اپنے اپنے حصے کو دارالحکومت قرار دیں۔
لیکن اس میں شرط یہی ہے کہ دونوں ممالک کے حکام اس بات پر راضی ہوں۔ ڈاکٹر رمیش نے کہا کہ اسرائیل اور فلسطین کے دارالحکومت کے حوالے سے فیصلہ کرنے کا کسی تیسرے ملک کو حق حاصل نہیں ہے ۔

Title: hindu council chairman dr ramesh kumar condemn us stand on jerusale | In Category: پاکستان  ( pakistan )

Leave a Reply